جنسی ہراسانی کے الزام کے بعد حمید ہارون میدان میں
31 دسمبر 2019 (18:14) 2019-12-31

کراچی : فلم ڈائریکٹر جامی کی طرف سے جنسی زیادتی کے الزامات عائد کیے جانے اور اب سوشل میڈیا پر باقاعدہ نام لے کر الزام لگانے کے بعد بڑے میڈیا گروپ کے مالک حمید ہارون بھی منظر عام پر آگئے ہیں اور انہوں نے اپنے ردعمل میں اسے ’’کسی خاص‘‘ گروپ کی طرف سے ان کیخلاف پروپیگنڈہ قرار دیا ہے اور قانونی کاررواگی کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستانی فلم اور میوزک ویڈیو ڈائریکٹر جامی نے چند ماہ قبل اپنی ایک ٹویٹ میں اشاروں کنایوں میں ایک بڑے میڈیا گروپ کے مالک پر الزام لگایا تھا کہ انہوں نے 13 سال قبل انہیں جنسی ہراسانی کا نشانہ بنایا تھا لیکن اپنے اس الزام میں انہوں نے کسی کا نام نہیں لیا تھا لیکن اب کی بار انہوں نے 28 دسمبر کو اپنی ٹویٹ میں واضح طور پر بڑے میڈیا گروپ ’’ڈان‘‘ کے سی ای او حمید ہارون پر جنسی ہراسانی کا الزام عائد کردیا۔

مگر اس بار حمید ہارون نے واضح طور پر اپنا نام لئے جانے کے بعد اپنا ردعمل جاری کر دیا ہے۔ حمید ہارون نے اپنے میڈیا گروپ پر جامی کی طرف سے لگائے جانے والے الزام کی خبر کو تفصیل کے ساتھ شائع کیا اور پھر اپنا ردعمل بھی جاری کیا۔ میڈیا کے حلقوں میں حمید ہارون کے اس اقدام کی بڑی تعریف کی جا رہی ہے اور اسے تحسین کی نگاہوں سے دیکھا جا رہا ہے کہ حمید ہارون نے خود پر جنسی ہراسانی کا الزام لگانے والے کو بھی مناسب کوریج دی ہے۔

حمید ہارون نے اپنے تفصیلی ردعمل میں کہا کہ اس سے قبل بھی ایک ٹریٹ میں اشاروں میں ان کی ذکر کیا گیا لیکن کیونکہ ان کا نام واضح طور پر نہیں لیا گیا تھا اس لئے انہوں نے ردعمل دینا مناسب نہیں سمجھا لیکن اس بار ان نام واضح طور پر لیا گیا ہے ۔ حمید ہارون نے واضح طور پر کہا تھا ’’یہ کہانی جھوٹی ہے ان لوگوں کے ایما پر جان بوجھ کر تیار کی گئی ہے جو ان کو خاموش کروانا چاہتے ہیں۔ حمید ہارون نے اس سارے معاملے پر قانونی کارروائی کا الزام کر دیا۔


ای پیپر