بابر اعظم پر الزام یا نصیحت ! رمیض راجہ چپ نہ رہ سکے
30 May 2020 (16:51) 2020-05-30

لاہور : سابق قومی کپتان اور عصر حاضر کے بہترین کمنٹیٹر رمیز راجہ نے قومی ٹیم کیلئے مناسب کمبی نیشن کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ مختصر فارمیٹ کے قائد بابراعظم گرین شرٹس سائیڈ کی بہتری کیلئے مضبوطی سے فیصلے کریں۔

رمیز راجہ نے کہا کہ بابراعظم کو یہ بات سمجھنا ضروری ہے کہ وہ مضبوط فیصلے کر کے ہی قیادت کی قیمت ادا کرنے کی ضرورت پوری کر سکتے ہیں کیونکہ ٹیم کے مفاد میں قدم اٹھاتے ہوئے انہیں اپنے ان دوستوں کی قربانی بھی دینا ہوگی جن کے ساتھ وہ نچلے درجے پر کرکٹ کھیلتے رہے ہیں کیونکہ ان میں سے کوئی بھی ٹیم کامبی نیشن کی بہتری میں اپنا کردار ادا نہیں کر سکے گا۔

سابق قومی کپتان کا کہنا تھا کہ اگر بابراعظم کی خواہش عمران خان جیسا کپتان بننے کی ہے تو انہیں یاد رکھنا چاہئے کہ عمران خان میرٹ کی بنیاد پر فیصلے کرتے تھے اور حریف ٹیم کو دیکھتے ہوئے اپنی ٹیم میں تبدیلی کرنا ان کی عادت تھی جس کا سامنا انہیں کرنا ہوتا تھا۔

رمیز راجہ کا کہنا تھا کہ ورلڈ کپ کے فاتح کپتان کے نقش قدم پر چلتے ہوئے بابر اعظم کو اس ا?زادی کی بھی شدت سے ضرورت محسوس ہو گی کہ وہ ٹیم سلیکشن اور حکمت عملی کے اعتبار سے اپنے فیصلے کر سکیں کیونکہ دوسری صورت میں وہ مطلوبہ نتائج کے حصول میں کامیاب نہیں ہو سکیں گے اور قوم نے جو امیدیں ان سے وابستہ کرلی ہیں وہ بھی پوری نہیں ہوں گی۔


ای پیپر