Doctors, unemployment, PTI Government, Young Doctors Association, Pakistan
30 جنوری 2021 (13:31) 2021-01-30

لاہور: ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن کا کہنا ہے کہ پی ٹی آئی کی حکومت میں سب سے زیادہ ڈاکٹرز کو بے روز گار کیا گیا ہے دنیا میں وبا کے دنوں ڈاکٹرز بھرتے کیے گئے مگر یہاں بھرتی پر پابندی لگا دی گئی سنٹرل انڈکشن پالیسی کو نہیں مانتے۔

سروسز ہسپتال میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن کے رہنماؤں کا کہنا تھا کہ پشاور میں ایم ٹی آئی ایکٹ لگا کر شعبہ صحت کو تباہ کیا ۔ اب پنجاب میں ایم ٹی آئی ایکٹ لگا کر شعبہ صحت تباہ کیا جا رہا ہے ، عوام کو صحت کی سہولتوں کی لالچ دے کر ہسپتالوں کی نجکاری کی جا رہی ہے۔

ینگ ڈاکٹرز کا کہنا تھا کہ پاکستان بدقسمتی سے وہ ملک ہے جہاں 1 ہزار مریضوں کو 1 ڈاکٹر سنبھالنے والا ہے ، پاکستان ڈاکٹرز کو ایکسپورٹ کرنے والی کمپنی بن چکا ہے صحت کے شعبہ کو بہتر کرنا چاہتے ہیں تو ٹیچنگ ہسپتال آخر میں آتے ہیں پہلے بی ایچ یو کو بہتر کریں۔

وائے ڈی اے رہنماؤں کا کہنا تھا کہ ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ پی پی ایس سی کے تمام ٹیکنیکل اسسٹنٹ اور انتظامیہ کے موبائل چیک کئے جائیں۔ پی پی ایس سی نے میرٹ کی خلاف ورزیاں کیں سنٹرل انڈکش پالیسی کو نہیں مانتے ریسرچ مارکس میں بے ضابطگیاں ہوئیں تو محکمہ صحت کے باہر احتجاج کریں گے۔


ای پیپر