Broadsheet scandal, probe, notification, commission, justice retired Azmat Saeed
30 جنوری 2021 (11:19) 2021-01-30

اسلام آباد: براڈشیٹ اسکینڈل کی تحقیقات کیلئے جسٹس (ر) عظمت سعید پر مشتمل ایک رکنی کمیشن کا نوٹیفکیشن جاری۔ وزیراعظم عمران خان کی ہدایت پر کابینہ ڈویژن نے نوٹیفکیشن جاری کیا۔

تفصیلات کے مطابق کمیشن کے ٹی او آرز بھی سامنے آگئے، تحقیقات کے لیے افسران اور ماہرین پر مشتمل کمیٹیاں بنانے کا اختیار ہوگا ، کمیشن 2003 میں براڈشیٹ اور انٹرنیشنل ایسٹ ریکوری (آئی اے آر) فرمز سے معاہدوں کی منسوخی کی وجوہات کی جانچ کرے گا۔

یاد رہے کہ اپوزیشن جماعتیں پہلے ہی براڈشیٹ اسکینڈل کی تحقیقات کیلئے جسٹس (ر) عظمت سعید کو مسترد کر چکی ہیں۔

گزشتہ روز ن لیگ کے رہنما احسن اقبال نے کہا تھا کہ عظمت سعید سے ذاتی دشمنی نہیں مگر وہ پورے معاملے میں فریق ہیں۔ عظمت سعید براڈشیٹ معاہدے کے وقت نیب ٹیم میں شامل تھے ، وہ شوکت خانم بورڈز کے ممبر ہیں ، اُن سے تحقیقات کرانے کا مقصد کچھ تو پردہ داری ہے۔

انہوں نے کہا کہ براڈشیٹ ملکی تاریخ کا سب سے بڑا اسکینڈل ہے ، دال میں کچھ کالا نہیں ، سپر کالا ہے۔ لیگی رہنما نے کہا کہ پی آئی اے کی لیز ادا نہیں کی لیکن براڈشیٹ کو ایڈوانس ادائیگی کردی گئی۔

احسن اقبال نے کہا کہ بیانیہ پھیلایا جا رہا ہے کہ عمران نیازی کے علاوہ سب چور ہیں ، ایمانداری کے جملہ حقوق صرف عمران نیازی کے پاس ہیں لیکن ٹرانسپیرنسی کی رپورٹ نے تبدیلی سرکار کی ایمانداری کا پول کھول کر رکھ دیا ہے۔


ای پیپر