آئی ایم ایف نے وزیر اعظم عمران خان کو کڑے امتحان میں ڈال دیا
29 ستمبر 2018 (17:38) 2018-09-29

اسلام آباد: تبدیلی کے باوجود آئی ایم ایف کی پاکستان کے معاشی امور میں مداخلت جاری، حکومت پاکستان سے مذاکرات کے دوران بجلی اور گیس کی قیمتوں میں بھی مذید اضافے کی بھی تجویز دے دی۔

تفصیلات کے مطابق آئی ایم ایف مشن اور حکومت پاکستان کے درمیان مذاکرات میں آئی ایم ایف نے پاکستان کی معاشی صورتحال غیر تسلی بخش قرار دے دی۔ آئی ایم ایف نے معاشی صورتحال بہتر بنانے کے لیے ٹھوس اقدامات کا مشورہ بھی دیدیا۔ آئی ایم ایف نے بجلی اور گیس کی قیمتوں میں بھی مذید اضافہ سمیت خسارے میں چلنے والے سرکاری اداروں کی نجکاری کی تجویز بھی دے دی۔

تجزیہ کاروں کے مطابق وزیر اعظم عمران خان کیلئے یہ ایک کڑا امتحان ثابت ہوگا کہ غریب عوام کو ریلیف کیسے دیا جائے اور ملک کی معیشت کو کیسے سنبھالا جائے ۔ سیکرٹری خزانہ عارف احمد خان ، گورنر اسٹیٹ بینک طارق باجوہ اور چیئرمین ایف بی آر نے وفد سے الگ الگ ملاقاتیں کیں۔ آئی ایم ایف مشن ریونیو، نجکاری کمیشن، وزارت تجارت اور منصوبہ بندی سے بھی ملاقاتیں کریگا۔ مزاکرات کا یہ عمل 4اکتوبر تک جاری رہے گا۔


ای پیپر