PPP, PTI government, parliament, Khurshid Shah, PDM, PML-N
29 مارچ 2021 (13:53) 2021-03-29

سکھر : پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما خورشید شاہ نے کہا ہے کہ آج کل ہر جگہ پر سلیکٹڈ لفظ آگیا ہے ، استعفوں کے حق میں نہیں ، حکومت سے پارلیمنٹ میں بیٹھ کر جنگ کرنا چاہتے ہیں ۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خورشید شاہ نے کہا کہ امید کرتا ہوں پی ڈی ایم قائم رہے گی ، انہوں نے کہا کہ ہمیں ایک دوسرے کو برداشت کرنا پڑے گا ۔ ہم نے کوشش کی ساری پارٹیوں کو پارلیمنٹ میں لائیں ۔

رہنما پیپلز پارٹی نے کہا کہ پاکستان کا اہم معاملہ اسٹیٹ بینک سے متعلق آرڈیننس ہے ، یہ پاکستان کی سالمیت کیلئے زہریلا آرڈیننس ہے ، آرڈیننس کے بعد ہم براہ راست آئی ایم ایف کے ماتحت ہو جائیں گے ۔ حکومت چاہتی ہے پاکستان کو آئی ایم ایف کا غلام بنا دیا جائے ۔

خورشید شاہ نے کہا کہ ایسا کرنے سے حکومت بجٹ خود نہیں بناسکے گی اور نہ ہی سرکاری ملازمین کو تنخواہیں دی جاسکیں گی ، اس کے علاوہ عوام کیلئے اشیائے ضروریہ کی قیمتیں بڑھ جائیں گی ۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کو بات سمجھ نہیں آتی ، 2 سال بعد معافی مانگتے ہیں ، عمران خان سے کہتا ہوں بات کو سمجھ جائیں اور ایسی صورتحال پیدا نہ کریں کہ آپ اور ہم واپس نہ آسکیں ۔


ای پیپر