فوٹوبشکریہ فیس بک

سعودی عسکری اتحاد، حوثی باغی یمن میں جنگی جرائم میں ملوث ہیں: اقوام متحدہ
29 اگست 2018 (13:12) 2018-08-29

نیویارک: اقوام متحدہ کے تحقیق کاروں نے سعودی عسکری اتحاد اور حوثی باغی یمن میں جنگی جرائم میں ملوث پائے گئے ہیں۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ یمن میں سعودی اتحاد کے حملوں میں بڑے پیمانے پر عام شہری ہلاک ہوئے۔ یمن میں عالمی قوانین برائے انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں جنگی جرائم کے مترادف تھیں جس میں قید، ریپ، تشدد اور سورش زدہ علاقوں میں بچوں کو بھرتی کرنا شامل ہے۔

انسانی حقوق کے افسران کے مطابق گزشتہ 3 برس میں تقریباً 6 ہزار 660 شہری جاں بحق اور 10 ہزار 500 افراد زخمی ہوچکے ہیں جبکہ کئی شہروں میں انفرا اسٹریکچر مکمل طور پر تباہ ہو گیا جس کے باعث لاکھوں افراد دربدر ہوئے۔

ترجمان سعودی عسکری اتحاد نے کہا ہے کہ وہ رپورٹ کا جائزہ لے رہیں ہیں، قانونی مشاورت کے بعد رپورٹ پر ردعمل دیا جائے گا۔

امریکی وزیر دفاع جیمز میٹس نے کہا ہے کہ یمن کے معاملے پر سعودی اتحاد کی امداد غیر مشروط نہیں۔ امداد کا انحصار یمن میں شہریوں کی اموات روکنے کی کوشش سے جڑا ہے۔

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 


ای پیپر