مذہبی آزادی پر امریکی کمیشن کی رپورٹ، بھارت کا بھیانک چہرہ بے نقاب
29 اپریل 2020 (10:15) 2020-04-29

نیویارک: مذہبی آزادی پر امریکی کمیشن کی سالانہ رپورٹ نے بھارتی بھیانک چہرہ بے نقاب کر دیا، انتہا پسند مودی کے بھارت کو پہلی مرتبہ اقلیتوں کیلئے خطرناک ملک قرار دے دیا گیا۔

متنازع بھارتی شہریت بل کو امریکی کمیشن نے شدید تنقید کا نشانہ بنایا، امریکی کمیشن کے اعلامیہ کے مطابق بھارت سی پی سی ممالک کی فہرست میں شامل ہو گیا۔

امریکی کمیشن نے بابری مسجد سے متعلق سپریم کورٹ کے فیصلے اور مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کو منسوخ کرنے پر شدید تنقید کی ہے۔

رپورٹ میں پاکستان میں متعدد مثبت پیشرفتوں کا اعتراف کیا گیا ہے، کرتار پور راہداری کھولنا، پاکستان کا پہلا سکھ یونیورسٹی کھولنا، ہندو مندر کو دوبارہ کھولنے اور مذہبی اقلیتوں کے بارے میں حکومتی اقدامات کو سراہا گیا۔


ای پیپر