اگر ملک میں احتساب اور انصاف ہوتا تو شہباز شریف نہیں، عاصم باجوہ اور اس کا خاندان گرفتار ہوتا:مریم نواز
28 ستمبر 2020 (15:08) 2020-09-28

لاہور:پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز اور پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے شہباز شریف کی گرفتار پر شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔

تفصیلات کے مطابق مریم نواز نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر گرفتار ی پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ مریم کوئی غلطی نہ کریں،شہباز شریف کو صرف اسی لئے گرفتار کیا گیا ہے ،کیونکہ انہوں نے ان لوگوں کے ہاتھوں کھیلنا سے انکار کیا تھا  جو  انہیں  اپنے بھائی کے خلاف استعمال کرنا چاہتے تھے۔

مریم نواز نے مزید کہا کہ  انہوں (شہباز شریف )نے اپنے بھائی کے خلاف کھڑے ہونے کے  بجائے جیل کی سلاخوں کے پیچھے کھڑے ہونے کو ترجیح دی۔ شہباز شریف ، آپ کو  سلام !

انہوں نے مزید لکھا کہ اگر اس ملک میں احتساب اور انصاف ہوتا تو شہباز شریف نہیں، عاصم سلیم باجوہ اور اس کا خاندان گرفتار ہوتا۔

شہباز شریف کا صرف یہ قصور ہے کہ اس نے نواز شریف کا ساتھ نہیں چھوڑا۔ اس نے جیل جانے کو ترجیح دی مگر اپنے بھائی کو ساتھ کھڑا رہا۔ یہ انتقامی احتساب نواز شریف اور اس کے ساتھیوں کا حوصلہ پست نہیں کر سکتے۔ اب وہ وقت دور نہیں جب اس حکومت اور ان کو لانے والوں کا احتساب عوام کرے گی۔

آپ شہباز شریف کو گرفتار کر کے بھی اپنے جھوٹے اور جعلی مینڈیٹ کو نہیں بچا سکیں گے۔ شہباز شریف کی سربراہی میں مسلم لیگ (ن) کے وفد نے اے پی سی میں جو بھی فیصلے کیے مسلم لیگ (ن) کا ہر کارکن ان وعدوں پر ثابت قدم رہے گا۔ انشاءاللّہ! آج ہم سب شہباز شریف ہیں!

دوسری جانب چیئرمین پی پی پی بلاول بھٹو زرداری نے بھی شہباز شریف کی گرفتاری کی مذمت کرتے ہوئے حکومت سے مطالبہ کیا کہ شہباز شریف کو فوری طورپر رہا کیا جائے۔


ای پیپر