قومی خزانے کو نقصان پہنچانے پر حسین حقانی پر مقدمہ درج
28 مارچ 2018 (18:43) 2018-03-28

اسلام آباد:حکومتی فنڈز کا غلط استعمال اور قومی خزانے کو بیس لاکھ ڈالر سالانہ نقصان پہنچانے کا الزام میں سابق پاکستانی سفیر حسین حقانی پر مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔


تفصیلات کے مطابق مقدمہ ایف آئی اے اینٹی کرپشن سرکل میں درج کیا گیا ہے، ایف آئی آر کے متن میں کہا گیا ہے کہ حسین حقانی مئی 2008سے 2011تک امریکا میں پاکستان کے سفیر رہے،اس دوران انہوں نے اپنے عہدے کا غلط استعمال کر کے غیر قانونی فائدہ اٹھایا اور حکومتی فنڈز کا غلط استعمال کرتے ہوئے قومی خزانے کو سالانہ بیس لاکھ ڈالر کا نقصان پہنچایا۔ حسین حقانی کیخلاف مقدمے میں دفعات 3، 4، 409، 420اور 109 لگانے کے ساتھ ساتھ کرپشن کی روک تھام کے قانون کی دفعات بھی لگائی گئی ہیں۔


مقدمے کے متن میں مزید کہا گیا کہ امریکا میں پاکستانی سفارتخانے میں ہونے والی غبن کی تحقیقات جاری ہیں ، امریکا اور وزارت خارجہ سے مزید دستاویز ملنے پر تحقیقات مکمل کی جائیں گی اور اس غبن میں ملوث دیگر افسران کا تعین بھی تحقیقات کے دوران کیا جائے گا۔اس سے قبل بدھ کو سپریم کورٹ نے میمو گیٹ اسکینڈل میں حسین حقانی کو پاکستان واپس لانے کے لئے 30روز کی ڈیڈ لائن دیتے ہوئے کہا ہے کہ مقررہ وقت کے بعد کوئی عذر برداشت نہیں کیا جائے گا۔


ای پیپر