Source : Yahoo

آر او ز کا اپنی مرضی سے من پسند حلقوں میں دوبارہ گنتی کروانا زیادتی ہے :ایاز صادق
28 جولائی 2018 (18:34) 2018-07-28

اسلام آباد :سپیکر قومی اسمبلی ایاز صادق نے الیکشن کمیشن کے آفس کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ الیکشن کمیشن کو اپنی پسند اور نا پسند کے مطابق کام نہیں کرنا چاہیے بلکہ آئین اور قانون کے مطابق کام کریں ۔

ایاز صادق کی سربراہی میں مسلم لیگ(ن) کا وفد انتخابی نتائج پر تحفظات اور شکایات لے کر چیف الیکشن کمشنر سے ملاقات کے لیے الیکشن کمیشن پہنچا تاہم چیف الیکشن کمشنر نے ملاقات سے انکار کردیا۔اس موقع پر ایاز صادق نے بتایا کہ صبح چیف الیکشن کمشنر جسٹس(ر) سردار رضا خان سے فون پر بات ہوئی جس میں ان سے ملاقات کے لیے وقت دینے کی درخواست کی گئی لیکن اب ملنے سے انکار کیا جارہا ہے اور الیکشن کمیشن حکام کی جانب سے وقت دینے پر ٹال مٹول کی جا رہی ہے۔الیکشن کمیشن کو زیادہ با اختیار بنا نا غلطی تھی ،چیف الیکشن کمشنر مستعفی ہوں ۔

ایاز صادق نے کہا کہ الیکشن کمیشن کے رویے سے افسو س ہو اہے ،حلقے کھلونے کا اختیار عمران خان یا آر او ز کا اختیار نہیں ،ایازصادق کا کہنا تھا کہ آر او ز اپنی مر ضی سے حلقوں میں دوبارہ گنتی کا عمل کروا رہے ہیں ۔انہوں نے کہا ہم آج الیکشن کمیشن کے افسران سے ملنا چاہتے تھے لیکن افسوس ہوا کہ انھوں نے ہمارے سے ملاقات نہیں کی یہاں تک کہ فون کر کے بھی نہیں بتا یا کہ وہ آج ہم سے نہیں مل سکتے ۔

مسلم لیگ کے رہنماﺅں کا کہنا تھا کہ فارم 45نہ دینا بڑی دھاندلی ہے شاید ہی ایسا کوئی حلقہ ہو جہاں فارم 45مہیا کیا گیا ہو،اب عالم یہ ہے کہ جہاں جہاں درخواستیں دیں ہیں وہاں آر او ز اپنی مرضی سے دوبارہ گنتی کا عمل کروا رہیں جو ہمیں قبول نہیں ۔حیران ہیںکہ جواجہ سعد رفیق کا حلقہ کیوں نہیں کھولا جا رہا ،قانون کے مطابق اگر 5فیصد ووٹوں کا فرق ہو تو دوبارہ گنتی کروائی جا سکتی ہے ۔ایاز صاد ق نے اپنی غلطی کا اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ الیکشن کمیشن کو زیادہ بااختیار بنا نا ہماری غلطی تھی ۔


ای پیپر