Pakistan China Game Changer Plan
28 جنوری 2021 (19:30) 2021-01-28

اسلام آباد :پاکستان کیلئے ایک کے بعد ایک خوشخبری آ رہی ہے ،جہاں بھارت میں مودی کی انتہا پسند پالیسیوں کی وجہ سے ہنگامے فساد پھوٹ پڑے ہیں وہیں پاکستان کے پر امن حالات کو دیکھتے ہوئے چینی صدر نے پاکستان آنے کا عندیہ دیدیاہے ، وفاقی وزیر منصوبہ بندی اسد عمر نے کہا ہے کہ چین کے صدر رواں سال پاکستان کے دورے پر آرہے ہیں۔

اسد عمر کا کہنا تھا  چین کی 4 ٹریلین ڈالر کی درآمدات اور برآمدات ہیں، ہمیں درآمدات میں 20 ارب ڈالر کا حصہ لینے کی حکمت عملی بنانا ہوگی، 30 فیصد سی پیک منصوبے مکمل ہونے کو ہیں۔ انہوں نے آل پاکستان چیمبرز صدور کانفرس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ رواں سال چین کے صدر پاکستان کے دورے پر آرہے ہیں۔

 اسد عمر نے کہا کہ سی پیک کے تحت اقتصادی رابطے کیلئے کام شروع کردیا گیا ہے، چین کی 2 ٹریلین ڈالر کی برآمدات اور2 ٹریلین ڈالر کی درآمدات ہیں،پاکستان کو چین کی درآمدات میں اپنا حصہ کیسے لینا ہے،حکمت عملی طے کرنا ہوگی۔ اسد عمر نے کہا کہ اگر ایک فیصد بھی ہم چینی درآمدات کا حصہ لیں تو 20 ارب ڈالر بنتے ہیں۔

انہوں نے کہا بجلی کے تمام نظام کو بیوروکریسی کنٹرول کر رہی ہے جسے نجی شعبے میں لانا ہے، اسی طرح انٹرنیشنل پریس ایجنسی کے مطابق بیجنگ اور اسلام آباد نے پاک چین اقتصادی راہداری (سی پیک) کی موثر نگرانی کے لیے مشترکہ پارلیمانی کمیٹی کے قیام پر اتفاق کیا ہے رپورٹ میں کہا گیا کہ قومی اسمبلی کے اسپیکر اسد قیصر اور چینی قومی پیپلز کانگریس (این پی سی) کے چیئرمین لی ژانشو نے ورچوئل اجلاس کے دوران یہ فیصلہ لیا اور اپنی پارلیمنٹ کے سیکرٹریوں کو مشترکہ پارلیمانی کمیٹی کی تشکیل کے لیے ضروری اقدامات کرنے کی ہدایت کی۔


ای پیپر