file photo

کراچی میں بارش کی قیامت خیزی، برسات کا تباہ کن اسپیل
28 اگست 2020 (09:46) 2020-08-28

کراچی میں بارش اور اربن فلڈنگ کے باعث مختلف حادثات نے کئی افراد کی جان لے لی۔ مون سون کے اس اسپیل میں اب تک کراچی میں 35 افراد جاں بحق ہوچکے ہیں۔

گلستان جوہر میں آسمانی بجلی گرنے سے دیوار گر گئی، ملبے تلے دبنے والے سات افراد کی لاشیں نکالی جا چکی ہیں۔ جاں بحق ہونے والوں میں خواتین اور بچے شامل ہیں۔ وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے جائے حادثہ کا دورہ کیا متاثرین کا مدد کا حکم دیا۔

دوسری جانب نارتھ ناظم آباد میں اصغر علی شاہ اسٹیڈیم کے قریب لینڈ سلائیڈنگ کے دوران گھر کے اوپر وزنی پتھر گرگیا، چار افراد زخمی ہوگئے۔

ادھر جمعہ گوٹھ مائی گاڑی کے قریب مدرسے میں پھنسے طلبہ کو بحفاظت نکال لیا گیا، ایدھی کی ٹیموں نے 30 سے زائد طلبہ کو محفوظ مقام پر منتقل کر دیا۔ جبکہ شاہراہ فیصل پر ریسکیو کرنے والے پولیس اہلکار پانی میں پھنس گئے، موبائل وین سیلابی ریلے میں بہنے لگی، جسے بمشکل بچایا گیا۔


ای پیپر