فوٹوبشکریہ فیس بک

'وزیر اعظم ہاؤس میں بھینسوں، گاڑیوں کی نیلامی سے پاکستان کا مذاق اڑایا جا رہا ہے'
27 ستمبر 2018 (15:39) 2018-09-27

اسلام آباد: بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ وزیر اعظم ہاؤس میں بھینسوں، گاڑیوں کی نیلامی سے پاکستان کا مذاق اڑایا جا رہا ہے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بلاول بھٹو نے کہا کہ پہلے دن ہی کہا تھا کہ حکومت اچھا کام کرے گی تو تعریف کروں گا۔ منی بجٹ سے مایوسی ہوئی، یہ منی ڈراما ہے جو پی ٹی آئی کی عادت ہے۔ کرنٹ بجٹ خسارہ کم کرنے کے لیے کوئی اقدام نہیں کیا گیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ بجٹ میں کوئی نئی چیز سامنے نہیں آئی، کوئی انقلابی کام نظر نہیں آیا۔ روزگار کے بڑے وعدے کیے گئے، لیکن حکومتی پالیسی سے بے روزگاری بڑھے گی، بجلی اور گیس کی قیمت میں اضافے سے غریب بہت متاثر ہوگا۔ بجٹ میں فائدہ ہوا ہے تو وہ عمران خان کے اے ٹی ایم کو ہوا ہے۔ سوچ رہا تھا کہ اسد عمر عوام دوست بجٹ لائینگے، لیکن بجٹ میں نان ٹیکس فائلر کو فائدہ ہوا ہے۔ نان فائلر کو ریلیف دینا کسی اسکینڈل سے کم نہیں، خان صاحب کو اپنے وعدے پر قائم رہنا چاہیے۔

بلاول نے مزید کہا کہ منتخب نمائندے نے ایسی بات کی جو نہیں کرنی چاہیے تھی، منتخب نمائندوں کی جانب سے ایسی بات ان کے کردار کی عکاسی کرتی ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کی چیئرمین شپ اپوزیشن کو دی جائے۔

 

 

 

 


ای پیپر