gas load shedding,summer season,domestic consumers,shortfall
27 نومبر 2020 (21:58) 2020-11-27

 اسلام آباد: گرمیوں کے موسم میں لوڈ شیڈنگ سے اکتائی ہوئی عوام کو اب سردیوں میں گیس کی کمی کا سامنا کرنا پڑے گا اور خاص طور پر گھریلو صارفین کیلئے گیس کا شارٹ فال اڑھائی ارب مکعب فٹ یومیہ تک پہنچنے کا خدشہ ہے۔

تفصیلات کے مطابق سردیوں کا موسم آنے کے ساتھ ہی جہاں عوام کو لوڈ شیڈنگ کے عذاب سے قدرے سکون ملا تھا وہیں پر اب گھریلو صارفین کیلئے گیس کا کمی کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے۔ ایک اندازے کے مطابق گیس کا یہ بحران ملک بھر میں 20 دسمبر سے 21 جنوری کے دوران بدترین صورتحال اختیار کر لے گا اور ان کا سب سے بڑا نشانہ بھریلو صارفین بننے والے ہیں۔

سردیوں میں پاکستان بھر میں گیس کی یومیہ طلب 7 ارب مکعب فٹ ہے جبکہ ایل این جی کو شامل کر کے عوام کیلئے جو گیس فراہم کی جاسکتی ہے اس کی استعدادساڑھے چار ارب مکعب فٹ یومیہ تک ہے۔ اس اندازے کے مطابق گیس کے صارفین کو جو یومیہ گیس شارٹ فال کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے وہ تقریبا اڑھائی ارب مکعب فٹ تک پہنچ سکتا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ حکومت کوشش کر رہی ہے گیس کے اس شارٹ فال پر قابو پانے کیلئے اضافی ایل این جی درآمد کر لی جائے


ای پیپر