file photo

پنجاب حکومت کا عید کے موقع پر صوبے میں اسمارٹ لاک ڈاؤن کا فیصلہ
27 جولائی 2020 (13:12) 2020-07-27

لاہور: پنجاب حکومت کا عید کے موقع پر صوبے میں اسمارٹ لاک ڈاؤن کا فیصلہ، تاجر برادری کو ناگوار، اسلام آباد اور فیصل آباد کی تاجر برادری سراپا احتجاج، فیصلہ یکسر مسترد کر دیا۔

آل پاکستان انجمن تاجران کا کہنا ہے کہ پانچ ماہ سے تعاون کر رہے ہیں، زبردستی کی گئی تو مزاحمت کریں گے، حکومت سے غیر منتخب مشیروں اور وزیروں کو فارغ کرنے کا مطالبہ بھی کر دیا، دوسری جانب اسلام آباد انتظامیہ نے شہر میں تفریحی مقامات بند کر دئیے، عوام سے عید پر سیر و تفریح سے گریز کی اپیل کر دی۔

کورونا سے عید الاضحیٰ کی خوشیاں پھیکی پڑ گئیں، پنجاب حکومت کا صوبے میں اسمارٹ لاک ڈاؤن کا فیصلہ، مویشی منڈیوں میں معمر افراد اور بچوں کے داخلے پر پابندی۔ ماسک پہننے سمیت دیگر ایس او پیز پر عملدرآمد لازمی قرار۔

چیف سیکرٹری پنجاب کا کہنا ہے کہ اسمارٹ لاک ڈاؤن کا فیصلہ مفاد عامہ کیلئے کیا گیا۔ اسلام آباد میں عید تعطیلات تک پبلک مقامات بند رکھنے کا اعلان۔ مری ایکسپریس وے، مارگلہ، پارکس، تفریحی مقامات، ہوٹلز، پکنک پوائنٹس اور ہل اسٹیشن بند رہیں گے۔ ضلعی انتظامیہ کی عوام سے سیاحت اور تفریحی سرگرمیوں سے گریز کی اپیل۔

ادھر فیصل آباد میں عید سے دو روز قبل مکمل لاک ڈاؤن، مارکیٹیں بازار بند، تاجر تنظیمیں سراپا احتجاج۔ حکومتی فیصلے کو ظالمانہ فیصلہ قرار دے دیا۔

دوسری جانب کورونا ایس او پیز نظر انداز کر دئیے، پشاور میں بھی مارکیٹیں اور بازار کھل گئے، لوگ بھی خریداری کیلئے نکل پڑے، ماسک اور سماجی فاصلے کی احتیاط کہیں دیکھنے کو نہیں ملی، ضلعی انتظامیہ کا ایکشن، جرمانے عائد کئے اور گرفتاریاں بھی ہوئیں۔


ای پیپر