PDM Plan B Expose
27 جنوری 2021 (15:36) 2021-01-27

اسلام آباد :پی ڈی ایم کے احتجاجی پلان میں تبدیلی کے پہلے مرحلے میں پارلیمنٹ کوبھی مفلوج بنانیکافیصلہ کیاگیاہے،جس کیلئے اپوزیشن نے منصوبہ بندی کر لی، اپوزیشن جماعتیں احتجاجی جلسوں کیساتھ ساتھ اب قومی اسمبلی اورسینیٹ میں بھی سخت احتجاج کریگی۔

 اپوزیشن کے مختلف ذرائع سے گفتگو کے دوران ایک پلان بی سامنے آیا ہے جسکے تحت پیپلزپارٹی کیطرف سے ایوان میں رہتے ہوئے احتجاج کی تجویز کوتسلیم کیا گیا،جس پر ن لیگ اور پی ڈی ایم کی دیگرجماعتوں کے درمیان بات چیت جاری ہے،اب اپوزیشن ایوان کے کورم سے لیکراسمبلی بزنس تک ہرمقام پر سخت مزاحمت کریگی۔

گذشتہ روزن لیگ کی پارلیمانی پارٹی کے بعد گذشتہ  روز بھی مریم نواز نے ایک اہم اجلاس کی صدارت کی جس میںاحتجاجی پلان پر غور کیا گیا،مریم نواز کیطرف سے اراکین کو حوصلہ بھی دیاگیاکہ گھبرانا نہیں، مشکل وقت ہم گزار چکے ہیں،انہو ںنے اراکین پارلیمنٹ کو ثابت قدم رہنے کی بھی ہدایت کی۔

 ذرائع نے یہ بھی بتایا ہے کہ پیر کے روزاپوزیشن کے ممکنہ سخت احتجاج کے باعث حکومت نے قومی اسمبلی کااجلاس دو دن کیلئے موخر کرنیکاپلان بنایا گیاتھالیکن صورتحال بہتر ہونے کے باعث ایسا نہیںکیا گیا، تاہم آنیوالے دنوں میں حکومت کوایوان کے اندربھی سخت مزاحمت کا سامنا کرنا پڑیگا۔


ای پیپر