پنجاب حکومت سیاحت کے فروغ کیلئے کوشاں 
27 فروری 2021 2021-02-27

تحریک انصاف کی حکومت نے سیاحت کے فروغ کا عزم کیا تھا جس کے لئے عمران خان نے نہ صرف زلفی بخاری کو ٹاسک سونپا بلکہ صوبائی حکومتوں خواہ وہاں تحریک انصاف کی حکومت ہو یا نہ ہو کو اینکریج کیا کہ وہ اپنے اپنے صوبوں میں سیاحت کے فروغ اور سیاحوں کی آمد کے پیش نظر مثبت اقدامات کریں خیبر پختو نخواہ ہو پنجاب یا سندھ .اور اس حوالے سے بہت کام ہو سکتا ہے کے پی کے میں شمالی علاقہ جات دنیا بھر کے سیاحوں کیلئے بے پناہ کشش کے حامل ہیں سیاحوں کی نظر میں شمالی علاقہ جات کو پاکستان کا سوئزرلینڈ کہا جاتا ہے پاک فوج کے آپریشن ردالفساد کو چار سال مکمل ہونے پر ان کے شہداءکو بھی سلام پیش کرنا چاہوں گاجنہوں نے ہمارے سوئزرلینڈ میں اپنی قیمتی جانوں کا نذرانہ دیکر اسے امن کا گہوارہ بنانے میں مثالی کردار ادا کیا. کے پی کے گلگت بلتستان میں تحریک انصاف کی حکومت ہونے کے باوجود وزیراعظم کے ویژن کوآگے بڑھانے میں کامیاب نہیں ہوسکے۔ سندھ میں پاکستان کا سب سے بڑا جزیرہ منوڑا واقع ہونے کے باوجود سندھ حکومت سیاحت کو فروغ دینے میں ناکام رہی ہے۔ ادھر پنجاب میں تاریخی اہمیت کے مقامات کی نمایاں حیثیت ہے وزیراعلیٰ عثمان بزدار ہمیشہ اپنی بردباری اخلاقیات و روایات کی وجہ سے ملک کے دوسرے صوبوں کے وزراءاعلیٰ سے نمایاں ہی رہے بلکہ مشیر سیاحت آصف محمود سے بہترین کوارڈینیشن کی بدولت واحد وزیر اعلیٰ ہیں جو نہ صرف سولہویں جیپ ریلی میں شریک ہوئے بلکہ محکمہ سیاحت کے بورڈ آف گورنر کے اجلاس کی صدارت کے علاوہ مختلف ایونٹس میں بھی شریک ہوئے جس وجہ سے یہ بات ثابت ہوتی ہے کہ وہ اور مشیر سیاحت عمران خان کے ویژن کو لیکر چل رہے ہیں۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ وزیراعلیٰ کو محکمہ سیاحت کے لئے کچھ بجٹ مختص کرنا ہوگا پنجاب میں حالیہ برسوں میں سیاحت کے فروغ کیلئے کی جانے والی کاوشوں کا اندازہ لگایا جائے تو عثمان بزدار اور انکی ٹیم سیکرٹری احسان بھٹہ ایم ڈی تنویر جبار جنرل مینجر عاصم کی سربراہی میں محکمہ سیاحت نے دن دوگنی اور رات چوگنی ترقی کی ہے پنجاب میں شہروں کی تاریخ اور سیاحتی نمایاں مقامات کو دیکھنے کے لئے ڈبل ڈیکر بس سروس کے ذریعے مختلف ایونٹس کریٹ کرکے پنجاب کو دنیا کی نظر میں اجاگر کرنا بہت بڑی کامیابی تصور ہو رہی ہے اگر سیاحت کا بجٹ مختص کیا گیا تو یہ افسران وزیراعلیٰ کے پروفائل میں چار چاند لگا دیں گے۔ پنجاب کے دل لاہور جڑواں شہروں اور بہاولپور میں سیاحوں کیلئے ڈبل ڈیکر بس سروس شروع کی ہو ئی ہے جو سیاحوں کو شہر کے اہم مقامات کا دورہ کرواتی ہے اس بس سروس کے ذریعے سیاح شہر لاہور کے تاریخی مقامات کے ساتھ ساتھ شہر کے مشہور مقامات عمارتوں و شاہراہوں کا نظارہ بھی کر سکتے ہیں اور خاص طور پر ڈبل ڈیکر بس پر ایسے نظاروں کا اپنا ہی لطف ہے اصل میں محکمہ سیاحت میں دوسرے محکموں کی طرح فنڈز کی فراوانی بالکل نہیں ہے محدود وسائل میں سیاحوں کو دنیا بھر سے متوجہ کرنے کا فن ان افسران کو آنا بہت ضروری ہے جس طرح طاہر محمود رانا محکمہ سیاحت کے لئے مختلف تجاویز جدید طرز پر تیار کرتے ہیں جو افسران کی آنکھوں کا تارا بھی سمجھے جاتے ہیں اسی طرح اشفاق احمد ڈوگر جو بس سروس پنجاب کے پراجیکٹ ہیڈ کے طور پر جب سے خدمات انجام دے رہے ہیں کوئی نہ کوئی آئیڈیا فلوٹ کرکے نہ صرف اپنے محکمے بلکہ بیرون ممالک کے سیاحوں کی نظروں میں بھی محکمہ سیاحت کے اقدامات کی وجہ سے قد کاٹھ میں اضافے کا باعث بنتے ہیں حال ہی میں اشفاق ڈوگر نے جو موضوع منتخب کیا یہ وہ موضوع تھا جس پر پاکستان میں کوئی قابل ذکر کام نہیں ہو رہا مگرمغرب میں نہ صرف بچے بلکہ خصوصی بچوں کا پروٹوکول انکے سربراہ مملکت جتنا ہے مہذب معاشرے اس پر خاصی توجہ دیتے ہیں .اشفاق ڈوگر نے اسی موضوع کو مدنظر رکھتے ہوئے خصوصی بچوں کی تعلیم و تربیت کرنے والی ایک معروف این جی او مشعل راہ کے ساتھ ملکر ان بچوں کے نام پر ایک دن منانے کا پروگرام ترتیب دیا جس میں مجھے بھی دعوت نامہ دیا گیا خصوصی بچوں کی بڑی تعداد اپنے والدین اور مشعل راہ کے اساتذہ اور روح رواں آمنہ آفتاب کی سربراہی میں موجود تھی اس تفریحی وسیاحتی دورے کو اشفاق ڈوگر جو اسلام آباد راولپنڈی بہاولپور اور لاہور کی سٹی ٹورز بسیز کے پراجیکٹ ہیڈ ہیں اور محکمہ سیاحت میں اپنی انتھک محنت سے محکمے کی عزت و توقیر کا باعث بن رہے ہیں اور ان کی ٹیم نے بہت اعلیٰ آرگنا ئز کیا تھا۔ 

مشعل راہ فاو¿نڈیشن کے بچے اور ان کے والدین بھی بہت مسرور دکھا ئی دے رہے تھے ۔آمنہ آفتاب کی اس این جی او کو مسائل سے نکال کر وسائل تک پہنچانے میں درشن سنگھ کا کردار قابل تعریف ہے حکومت کو آمنہ آفتاب کے مشن کی نہ صرف سرپرستی کرنی چاہیے بلکہ بجٹ بھی مختص کرنا چاہیے .میں خود بھی اس موقع پر خصوصی بچوں کی تعلیم وتربیت کیلئے آمنہ آفتاب کے عزم و جذبے سے بہت متاثر ہوا ۔خصوصی بچوں نے تفریحی وسیاحتی دورے سے قبل ڈھول کی تھاپ پر دل کھول کر بھنگڑے ڈالے اور پھر شہر کا نظارہ کیا اس موقع پر خصوصی بچوں کو معروف گلوکار طارق طافو نے لاہور لاہور اے گانا بھی سنایا جس پر شہر لاہور کے خوبصورت نظارے کرتے بچے خوشی سے جھو متے رہے اس موقع پر ڈسٹرکٹ گورنر روٹری کلب مبارک علی شاہد.سی ای او کلب کے اعجاز چوہدری .منیجر پتریاٹہ چیئر لفٹ اعجاز بٹ جوکہ پتریاٹہ چئیر لفٹ اور سیاحتی مقامات کی جانب ملکی و غیر ملکی سیاحوں کو راغب کرنے کے لئے مختلف ایونٹس کرواکر پتریاٹہ چیئر لفٹ کو تین کروڑ آمدن سے ساڑھے پانچ کروڑ کی حیرت انگیز آمدن پر لیجانے میں کامیاب ہوگئے ہیں اورمزید محنت پر یقین رکھے ہوئے ہیں جو کہ محکمہ سیاحت کے لئے قابل فخر بات ہے اس سپیشل چائلڈ ڈے پر خصوصی طور پر سینئر صحافی حنیف قمر .رانا کامران. شہزاد احمد بھی خصوصی بچوں کی خوشیوں میں شریک تھے۔


ای پیپر