فوٹو بشکریہ فیس بک

بھارت کو کہا تھا جارحیت کی گئی تو جوابی کارروائی ہو گی: وزیراعظم عمران خان
27 فروری 2019 (15:52) 2019-02-27

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے ایک بار پھر بھارت کو مذاکرات کی دعوت دیدی، ان کا کہنا ہے کہ جنگ کسی مسئلے کا حل نہیں۔

قوم سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ چاہتا تھا موجودہ صورتحال پر قوم کو اعتماد میں لوں۔ پلوامہ حملے کے بعد بھارت کو تحقیقات میں مدد کی پیشکش کی تھی۔ پاکستان کے مفاد میں نہیں کوئی ہماری سرزمین استعمال کرے۔ خدشہ تھا ہندوستان کوئی کارروائی کرے گا۔ بھارت کو کہا تھا جارحیت کی گئی تو جوابی کارروائی ہو گی۔ آج کی کارروائی کا مقصد بھارت کو بتانا تھا ہم میں دفاع کی صلاحیت ہے۔ کوئی خودمختار ملک اپنی سلامتی پر سمجھوتہ نہیں کرتا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ضروری ہے ہم عقل اور حکمت سے کام لیں۔ دوسری جنگ عظیم چند ماہ میں ختم ہونا تھی مگر 6 سال لگ گئے، جنگ شروع ہوئی تو پھر کسی کے کنٹرول میں نہیں ہو گی، معاملات خراب ہوئے تو صورتحال نہ میرے اختیار میں رہے گی نہ نریندرمودی کے۔

عمران خان نے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں 70 ہزار پاکستانیوں کی جانیں گئیں۔ شہید اور زخمی ہونے والوں کے خاندان کی مشکلات ہم نے دیکھی ہیں۔


ای پیپر