PDM jalsa, PPP, PML-N ,Maryam Nawaz
27 دسمبر 2020 (18:37) 2020-12-27

 گڑھی خدابخش: پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے وزیراعظم عمران خان پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ یہ تو این آر او دینے کے بھی قابل نہیں ہے۔

جلسے سے خطاب کرتے ہوئے مریم نواز کا کہنا تھا کہ میثاق جمہوریت صرف ایک اتحاد یا کاغذ کا ٹکرا نہیں تھا ، سیاسی حریف ہونے کے باوجود پی ڈی ایم قیادت ایک اسٹیج پر ایک فیملی کیطرح اکٹھی ہے۔ ماضی میں سیاستدانوں سے غلطیاں ہوئی، اسی ازالہ کی وجہ سے جمہوری حکومتیں اپنی مدت پوری کرنے لگیں۔ ایک دوسرے کے خلاف سازشوں پر کہا اب سازشیں نہیں کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ 2014 میں منتخب حکومت کیخلاف سازش کی گئی۔

مریم نے کہا کہ نالائق کو ووٹ چوری کرکے قوم پر مسلط کر دیا گیا، عمران خان چیخ، چیخ کر کہہ رہا ہے مجھے کچھ نہیں آتا، عمران خان ڈھٹائی سے کہتے ہیں کام کرنا نہیں آتا، عمران خان کہتے ہیں بغیر تیاری حکومتوں میں نہیں آنا چاہیے۔ ڈھٹائی سے کہتے ہیں لوگ خود کشیاں کر رہے ہیں تو کیا کروں۔

انہوں نے کہا کہ عدالتوں میں پیشیاں سیاستدان بھگتے ہیں ، سیاستدانوں کی بہو، بیٹیوں کو عدالتوں میں گھسیٹا جاتا ہے۔ مریم نے کہا کہ کردار کشی صرف سیاستدانوں کی ہوتی ہے۔ یاد رکھو نظریے کو پھانسی نہیں لگ سکتی ، پرویز مشرف کو پاکستان لانے کی بات تک نہیں ہوتی لیکن نواز شریف کو اشتہاری قرار دے دیا۔

نائب صدر ن لیگ نے کہا کہ ناکام شخص پی ڈی ایم سے این آر او مانگ رہا ہے۔  حکومت کے گھر جانے تک غریبوں کے چولہے نہیں جل سکتے۔ عوام نااہل حکومت کو گھر بھیجنے کیلئے پی ڈی ایم کا ساتھ دیں، اب ملک اس طرح نہیں چلے گا، کوئی ملک توڑے تو معصوم، کشمیر کا مقدمہ ہارے تو بھی معصوم۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کہتے ہیں اپوزیشن فوج کو بدنام کر رہی ہے ، یہ پہلا سیاستدان ہے جس نے بھارت میں فوج کیخلاف بات کی۔


ای پیپر