Source : Yahoo

صدارتی امیدوار کے لئے حکومت اور اپوزیشن کی طرف سے کاغذات نامزدگی جمع
27 اگست 2018 (18:31) 2018-08-27

اسلام آباد : صدارتی امیدوا ر کے لئے جاری نمبر گیم اپنے عروج پر ہے ،تحریک انصاف نے عارف علوی کا نام فائنل کر دیا جس کے مقابلے میں متحدہ اپوزیشن سر توڑ کوشش کے باوجو د بھی اپنا مشترکہ امیدوار نہ لاسکی ۔

تفصیلات کے مطابق اپوزیشن اتحاد مشترکہ صدارتی امیدوار لانے میں ناکام رہا، تحریک انصاف کے ڈاکٹر عارف علوی، پیپلز پارٹی کے اعتزاز احسن اور حزب اختلاف کی دیگر جماعتوں کے امیدوار مولانا فضل الرحمان نے کاغذات نامزدگی جمع کرادیے۔

مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ متحدہ اپوزیشن نے بھرپور کوشش کی کہ متفقہ صدارتی امیدوار سامنے لے آئیں لیکن افسو س سے کہنا پڑتا ہے ایسا ہو نہ سکا ،ن لیگ اور پیپلز پارٹی کا کسی امیدوار پر اتفاق نہ ہو سکا ،ان کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن کو پیپلزپارٹی کے نامزد کردہ نام اعتزاز احسن پر اعتراض تھا جس پر بڑی بیٹھک مری ہاﺅس میں جاری رہی ،مو لانا فضل الرحمن کا کہنا تھا کہ ہم امید کرتے ہیں کہ سابق صدر آصف زرداری اپنے فیصلے پر نظر ثانی کرینگے ،اپوزیشن کے دو امیدواروں سے ووٹ تقسیم ہو جائینگے ۔

4 ستمبر کو ہونے والے صدارتی انتخاب کے لیے کاغذات نامزدگی جمع کرانے کا وقت ختم ہوگیا اور مقررہ وقت تک تحریک انصاف کے ڈاکٹر عارف علوی کے اسلام آباد ہائیکورٹ اور سندھ ہائیکورٹ میں نامزدگی فارم جمع کرائے گئے۔اپوزیشن جماعتیں صدارتی انتخاب کے لیے مشترکہ امیدوار لانے میں ناکام رہیں اور اس سلسلے میں مری میں ہونے والی کل جماعتی کانفرنس بھی بے سود رہی۔

پیپلز پارٹی اعتزاز احسن کے نام پر ڈٹی رہی اور اس نام پر مسلم لیگ (ن) کے اعتراض کے بعد دیگر جماعتوں نے مولانا فضل الرحمان کو اپنا امیدوار نامزد کیا۔


ای پیپر