Fake accounts case: Corruption reference of Rs 8 billion filed against Asif Zardari
کیپشن:   فائل فوٹو
27 اپریل 2021 (13:26) 2021-04-27

اسلام آباد: جعلی اکاؤنٹس کیس میں سابق صدر آصف علی زرداری کیخلاف 8 ارب روپے کی بدعنوانی کا ریفرنس دائر کر دیا گیا ہے۔

اس ریفرنس میں سابق صدر آصف زرداری اور مشتاق احمد کو ملزم نامزد کیا گیا ہے۔ ریفرنس کے مطابق مشتاق احمد اور نجی سوسائٹی کے درمیان 8.3 ارب روپے کی غیر قانونی ٹرانزیکشن ہوئی۔ کراچی کے پوش علاقے میں 8.3 ارب روپے سے جائیدادیں خریدی گئیں۔

خیال رہے کہ اس سے قبل پارک لین ریفرنس میں آصف زرداری سمیت 10 ملزموں پر فرد جرم عائد کی جا چکی ہے۔ تاہم انہوں نے اپنے صحت جرم سے انکار کیا ہے۔ اس کیس کی سماعت کے دوران سابق صدر زرداری عدالت کے روبرو پیش نہیں ہوئے تھے، اس لئے بذریعہ ویڈیو لنک پر ان فرد جرم عائد کی گئی۔

خیال رہے کہ یہ پاکستانی تاریخ کا ایسا پہلا مقدمہ ثابت ہوا جس میں عدالت میں پیش ہوئے بغیر کسی مجرم پر فرد جرم عائد کی گئی۔ زرداری کے وکلا کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا تھا کہ چونکہ ان کے موکل کی صحت ٹھیک نہیں اس لئے وہ عدالت کے روبرو پیش نہیں ہو سکتے۔

دلچسپ بات یہ ہے کہ سابق صدر زرداری نے جج سے مکالمہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ وہ گزشتہ تین دہائیوں سے اس قسم کے مقدمات کا سامنا کر رہے ہیں، انھیں علم ہے کہ فرد جرم کس طرح عائد ہوتی ہے۔


ای پیپر