Corona devastation continues in India, 2771 more deaths, more than 300,000 case reports
کیپشن:   فائل فوٹو
27 اپریل 2021 (11:22) 2021-04-27

نئی دہلی: بھارت میں عالمی وبا کورونا وائرس کی تباہ کاریاں رکنے کا نام نہیں لے رہیں، گزشتہ روز بھی 2 ہزار 771 شہریوں کی اموات جبکہ 3 لاکھ 23 ہزار 144 نئے کیس رپورٹ ہوئے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق مریضوں کی تعداد میں اضافے کی وجہ سے ہسپتالوں میں بیڈز کی قلت پیدا ہو گئی ہے۔ انڈیا کی صورتحال اتنی گھمبیر ہے کہ آکسیجن سلینڈرز کو بلیک مارکیٹ میں اونے داموں فروخت کیا جا رہا ہے۔

ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن نے خبردار کیا ہے کہ انڈیا عالمی وبا کا مرکز بنتا جا رہا ہے۔ اگر انڈین حکومت نے صورتحال کو کنٹرول نہ کیا تو کورونا وائرس پورے خطے کو اپنی لپیٹ میں لے سکتا ہے۔

اس وقت کورونا وائرس کی دوسری لہر کی تباہ کاریوں کی وجہ سے پورے بھارت میں ہنگامی حالت نافذ ہے۔ لوگ اپنے پیاروں کی لاشیں اٹھا اٹھا کر تھک گئے ہیں۔ اعدادوشمار کے مطابق بھارت میں کورونا وائرس کی وجہ سے لگ بھگ ایک کروڑ ستر لاکھ سے زائد شہری متاثر ہو چکے ہیں۔

ڈبلیو ایچ او کی جانب سے جار اعدادوشمار میں کہا گیا ہے کہ بھارت میں روزانہ لاکھوں کورونا کے کیسز رپورٹ سامنے آ رہے ہیں۔ ہندوستان کے شہروں کی صورتحال دگرگوں ہے جہاں ہر طرف خوف ہے۔ کوئی اپنے پیاروں کو ہسپتال لے جانے کیلئے بھاگ رہا ہے، کوئی ڈاکٹر کی تلاش میں ہے تو کوئی آکسیجن اور وینٹی لیٹرز کے حصول کیلئے مارے مارے پھر رہے ہیں۔

دنیا بھر سے انڈیا کو کورونا وائرس کے تدارک کیلئے امداد تو ملنا شروع ہو چکی ہے تاہم وزیراعظم نریندرا مودی نے اس عالمی وبا کی لہر کو طوفان سے تشبیہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ ہمیں اندازہ ہی نہیں تھا کہ کورونا وائرس ہمارے ملک میں اتنی تباہ کاریاں پھیلائے گا۔


ای پیپر