سعودی عرب میں کوڑوں کی سزا ختم
27 اپریل 2020 (21:28) 2020-04-27

ریاض: سعودی عرب نے کوڑوں کی سزا کا خاتمہ کرنے کے بعد ایک اور بڑا اقدام کردیا، سعودی عرب میں بچوں کے لیے سزائے موت ختم کردی گئی۔

تفصیلات کے مطابق سعودی عرب کی طرف سے اعلان کیا گیا ہے کہ انہوں نے کوڑوں کی سزا کو ختم کرنے کا اعلان کیا ہے لیکن تاحال یہ سزا صرف نابالغوں کیلئے متروک کی گئی ہے جبکہ بالغ افراد پر پہلے کی طرح جرم کرنے پر اس سزا کا اطلاق کیا جائے گا۔ سعودی عرب کے انسانی حقوق کمیشن کے سربراہ نے ایک بیان میں بتایا کہ  فیصلے کا اطلاق ایسے بالغ افراد پر بھی ہوگا جو جرم کے وقت نابالغ تھے۔

سربراہ ہیومن رائٹس کمیشن کے مطابق سزا یافتہ بچوں کو زیادہ سے زیادہ 10 سال قید کی سزا دی جاسکے گی۔اس سے قبل اٹھارہ سال سے کم عمر مجرموں پر

بھی کوڑوں کی سزا کا اطلاق ہوتا ہے۔ دنیا بھر میں انسانی حقوق کی تنظیموں کی طرف سے سعودی حکومت کے اس اقدام پر خوشی کا اظہار کیا گیا ہے۔


ای پیپر