اکتو بر ،نومبر میں کیا ہونے جا رہا ہے ؟چوہدری نثار نے خبردار کر دیا
27 اپریل 2019 (18:24) 2019-04-27

راولپنڈی: پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما چوہدری نثار کا کہنا ہے کہ مجھے اقتدار کی خواہش نہیں روزہ رکھا ہوا ہے، آپ یقین کریں جب افطاری ہو گی تو بہت مزا آئے گا،موجودہ حکومتوں کی پالیسیوں سے محسوس ہو تا ہے کہ اکتوبر ،نومبر اور دسمبر میں ریکارڈ مہنگائی ہونے جا رہی ہے ۔

چوہدری نثار کاکہنا تھا کہ عمران خان دوسروں پر تنقید کرتے ہیں جب کہ خود ریکارڈ قرضے لیے، حالات بدترین نظر آ رہے ہیں۔پہلے جو ڈالر 100 روپے میں ملتا تھا اب وہ 150 میں بھی نہیں ملتا۔ان کے پاس مہنگائی کو کنٹرول کرنے کا کوئی فارمولا نہیں ہے۔اکتوبر ، نومبر اور دسمبر میں بہت زیادہ مہنگائی ہونے والی ہے۔

سابق وزیر داخلہ نے کہا کہ اگر عمران خان کے ساتھ ہوتا تو متحدہ رہنے کا مشورہ دیتا۔موجودہ حالات دشمنوں کو فائدہ دینے کے مترادف ہیں۔انہوں نے کہا کہ انتظامی یونٹ کو مسخ کر کے رکھ دیا گیا ہے۔ ضلع کونسل ختم کر دیا گیا، قانون پر احتجاج کروں گا۔بہت سے لوگ عدالت کا رخ کریں گے۔ تحریک انصاف اگر مقبول جماعت ہے تو الیکشن کرا کے دیکھ لے۔انتخابی نتائج نکال کر دیکھ لیں دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہو جائے گا۔

چوہدری نثار کا مزید کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن کے رہنما شاہد خاقان عباسی میرے پاس آئے تھے اور درخواست کی تھی کہ حلف اٹھا لوں۔میں نے انکار کرتے ہوئے کہا کہ حلف نہیں اٹھاو¿ں گا کیونکہ میرے ساتھ قومی اسمبلی میں دھوکا ہوا ہے۔خیال رہے کچھ روز سے خبریں زیر گردش تھیں کہ سینئیر سیاست دان چوہدری نثار نے سیاست میں پھر سے متحرک ہونے کا فیصلہ کیا ہے وہ جلد ہی حلف اٹھائیں گے اور انہیں وزیر اعلیٰ بنائے جانے کا بھی امکان ہے،انہوں نے کیا ان خبروں میں کوئی حقیقت نہیں میں تو ابھی حلف ہی نہیں اُٹھا رہا ۔


ای پیپر