چین کا شراکت دار ہونا پاکستان کی خوش قسمتی ہے : عمران خان
27 اپریل 2019 (14:01) 2019-04-27

بیجنگ :وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستان کی خوش قسمتی ہے کہ ہم چین کے شراکت دار ہیں، چین پاکستان اقتصادی راہداری پاکستان کیلئے بڑی تبدیلی کا باعث ہے، چین جدید دور میں کامیابی کی عظیم مثال ہے، بیلٹ اینڈ روڈ کے ذریعے سیاحت سے ثقافتی روابط کو بڑھایا جائے گا۔

بیجنگ نے وزیراعظم عمران خان نے لیڈرز گول میز کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ چینی صدر شی چن پھنگ اور ان کی حکومت کا شکرگزار ہوں، جمہوریہ چین کی 70ویں سالگرہ پر چینی صدر اور چینی عوام کو مبارکباد پیش کرتا ہوں، چین جدید دور میں کامیابی کی عظیم مثال ہے، چین نے پائیدار ترقی، معاشرتی اور عوامی زندگیوں میں واضح تبدیلی پیدا کی ،عظیم تبدیلی چینی قیادت کے ویژن اور عوام کی محنت سے ممکن ہوئی،صدر شی چن پھنگ نے بیلٹ اینڈ روڈ کا ویژن پیش کیا، بیلٹ اینڈ روڈ کے ویژن سے رکاوٹیں ختم ہوں گی اور عوام قریب آئیں گے۔

انہوں نے کہا کہ بیلٹ اینڈ روڈ ویژن سے معیشت کی ترقی اور خوشحالی ممکن ہو گی،اقتصادی راہداری روڈ ریل اور توانائی منصوبوں کے ذریعے خوشحالی کا منصوبہ ہے،ہائی ویز تعمیر کر رہے ہیں اور ریلوے کو جدید بنارہے ہیں، توانائی منصوبے، بندرگاہیں اور خصوصی اقتصادی زونز قائم کئے جا رہے ہیں۔نئی بندرگاہ خطوں کو آپس میں منسلک کرے گی، چین پاکستان اقتصادی راہداری پاکستان کیلئے بڑی تبدیلی کا باعث ہے، گوادر بندرگاہ سنکیانگ سے چینی ایشیاء کی ترسیل کیلئے مختصر راستہ ہے،گوادر بندرگاہ چینی کمپنیوں کیلئے ترسیلی لاگت میں کمی کا باعث بنے گی،بیلٹ اینڈ روڈ سے ڈیجیٹل رابطوں اور اطلاعات کے تبادلوں میں بہتری لانا ہو گی۔

عمران خان نے کہا کہ پاکستان کی خوش قسمتی ہے کہ ہم چین کے شراکت دار ہیں، بیلٹ اینڈ روڈ کے ذریعے سیاحت سے ثقافتی روابط کو بڑھایا جائے گا، ثقافت اور سیاحت کے فروغ کیلئے بی آر آئی ثقافتی راہداری کا قیام عمل میں لایا جائے، افرادی قوت کی تربیت کیلئے پروگرام ترتیب دیئے جائیں، پاکستان اہم خطوں کی گزرگاہ ہے، روابط چین پاکستان اقتصادی راہداری کا خاصہ ہیں، تاریخی طور پر پاکستان نے ثقافت اور تجارت کیلئے خطوں کو مربوط کیا، خطے کی خوشحالی سے مسائل کے حل ممکن ہو سکیں گے۔


ای پیپر