opposition-meeting-and-the-situation-in-the-country-the-prime-minister-convened-a-cabinet-meeting
26 اکتوبر 2020 (12:41) 2020-10-26

اسلام آباد: وفاقی کابینہ کا اجلاس کل دوپہر 12 بجے شروع ہوگا جس میں سیاسی، معاشی اور سلامتی سے متعلق امور کا جائزہ لیا جائے گا جبکہ کابینہ اپوزیشن کے جلسوں اور حکومت مخالف تحریک کا بھی جائزہ لے گی۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم کے زیر صدارت ہونے والے اجلاس میں کابینہ اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے جلسے میں ریاست مخالف تقریر کا بھی جائزہ لے گی۔ کابینہ کو محسن داوڑ کو بلوچستان روکنے کے معاملہ پر بھی بریفنگ دی جائے گی۔

وفاقی کابینہ مہنگائی پر قابو پانے کیلئے تازہ ترین صورتحال کا جائزہ لے گی۔ مہنگائی کے خاتمے سے متعلق حکومتی اقدامات اور اس کے نتائج کا جائزہ لیا جائے گا۔ کابینہ کو کورونا کی صورتحال اور اقدامات پر بریفنگ دی جائے گی۔ کابینہ کے اجلاس کا 12 نکاتی ایجنڈا بھی جاری کر دیا گیا ہے۔

گندم درآمد سے متعلق کابینہ اور اقتصادی رابطہ کمیٹی کے فیصلے ترتیب سے اجلاس کے سامنے رکھے جائیں گے۔ اب تک کتنی گندم درآمد ہو سکی؟ کابینہ کو ٹائم لائن سے آگاہ گیا جائے گا۔ چینی کی درآمد کے شیڈول پر بھی کابینہ کو بریفنگ دی جائے گی۔

وزارتوں، ڈویژنوں اور ماتحت اداروں میں سی ای اوز اور ایم ڈیز کی خالی پوسٹوں کی تفصیلات بھی پیش ہوں گی۔ کریمنل لا ریفارمز پر کابینہ کو تفصیلی بریفنگ دی جائے گی۔ عسکری ایئر کو آر پی ٹی کے لائسنس کی منسوخی کی منظوری دی جائے گی۔ کنونشن آن انٹرنیشنل سول ایوی ایشن کےآرٹیکل 50 اور 56 میں مجوزہ ترمیم کی منظوری دی جائے گی۔ پری شپمنٹ ایجنسی کو گندم کی درآمد کا ایک بار معائنہ کرنے کی اجازت دی جائے گی۔


ای پیپر