لاک ڈائون کیوں کیا ،یہ حل نہیں؟عالمی ادارہ صحت نے اہم بات بتا دی
26 مارچ 2020 (17:17) 2020-03-26

نیو یارک :عالمی ادارہ صحت نے تمام ممالک سے سوال کرتے ہوئے کہا کہ کرونا سے بچنے کیلئے لاک ڈائون کیوں کیا گیا ، لاک ڈائون کرکے کرونا سے بچا نہیں جا سکتا ۔

عالمی ادارۂ صحت کے ڈائریکٹر جنرل ٹیڈروس اذانوم گھبریائسس کا کہنا ہے کہ عالمی وبا کورونا وائرس سے ممالک میں لاک ڈاؤن کا آپشن استعمال کیا جا رہا ہے جو اس کا حل نہیں ہے ،ٹیڈروس اذانوم گھبریائسس نے مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ایک ویڈیو بیان میں کہا ہے کہ کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے اور اس کے خاتمے کے لیے دنیا بھر کے ممالک میں لاک ڈاؤن کیا جا رہا ہے مگر یہ ان کا اپنا فیصلہ ہے، لاک ڈاؤن کورونا کو ختم کرنے کا سبب نہیں بن سکتا، یہ کورونا پر الٹا اٹیک کر کے اس سے لڑنے کا وقت ہے ۔

ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے ہیڈ کوارٹر جنیوا میں میڈیا سے گفتگو کے دوران ٹیڈروس اذانوم گھبریائسس نے مزید کہا کہ اس وبا سے لڑنے کے لیے کوئی راستہ اپنائیں، جیسے کہ سخت اقدامات عمل میں لائیں، بر وقت ٹیسٹ کرنا مریض کو قرنطینہ کرنا اور اس کا علاج کرنا ہی اس کا بہتر حل ثابت ہو سکتا ہے، لاک ڈاؤن کا آپشن صرف ان ممالک کے لیے کار آمد ہے جن کے صحت کے محکمات کمزور اور صحت کا مضبوط نظام موجود نہیں ہے۔


ای پیپر