چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین سینٹ تبدیل کرنے کا فیصلہ ،اے پی سی اعلامیہ
26 جون 2019 (17:40) 2019-06-26

اسلام آباد :اے پی سی میں حکمران جماعت کیخلاف اہم فیصلے ،ملکی معیشت زمین بوس ہو گئی ،ملک دیوالیہ پن کی حدود کو عبور کرنے کی تیاری کر رہا ہے ،حکومتی قیادت کے فیصلوں نے ہمارے شکوک و شہبات کو یقین میں بدل دیا ہے،اے پی سی میں چیئرمین اورڈپٹی چیئرمین سینیٹ تبدیل کرنے پراتفاق ہوگیا۔مریم نواز نے اہم اعلان کرتے ہوئے کہا ایسا اقدام اُٹھائینگے کہ عمران خان تو جائے لیکن ایسا کوئی شخص پھر نہ آسکے ۔

مریم نواز نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا ہماری لڑائی عمران خان سے نہیں اسے سلیکٹ کرنے والوں سے ہے ،آج اگر صحیح فیصلہ نہ کیا تو قوم ہمیں کبھی معاف نہیں کریگی ،ملکی معیشت بدحالی کا شکار ہے اور قوم ہماری طرف دیکھ رہی ہے ،مریم نواز نے اہم اعلان کرتے ہوئے کہا ایسا اقدام اُٹھائینگے کہ عمران خان تو جائے لیکن ایسا کوئی شخص پھر نہ آسکے ، مریم نواز نے کہا احتساب کے عمل میں اپوزیشن کیلئے ایک ترازو اور حکومت کیلئے دوسرا ترازو استعمال کیا جا رہا ہے ،ہم ایسے احتساب کے آگے کیوں جھکیں،حکومت ہوش کے ناخن لیں جب پہلی اینٹ سرکے گی تو حکومت کی بنیادیں ہل جائیں گی ۔

اے پی سی اعلامیہ میںبرملا کہا گیا کہ نام نہاد حکمرانوں کو تمام سیاسی جماعتیں مسترد کر چکی ہیں ،ملک کا ہر شعبہ زبوں حالی کا شکار ہے ،ملکی معیشت زمین بوس ہو گئی ،ملک دیوالیہ پن کی حدود کو عبور کرنے کی تیاری کر رہا ہے ،حکومتی قیادت کے فیصلوں نے ہمارے شکوک و شہبات کو یقین میں بدل دیا ہے ،مہنگائی سے غریب عوام کی کمر ٹوٹ گئی ہے ،حکمرانوں کا ایجنڈا ملکی مفادات کی بجائے کسی گھناﺅنی سازش کا حصہ ہے ۔

اے پی سی میں مزید کہا گیا کہ ملک کے بڑے اداروں پر غیر ملکی مفاداتی اداروں کا کنٹرول ملکی معاشی خود مختاری داﺅ پر لگانے کے مترادف ہے ،معاشی زبوں حالی بیرونی ادائیگیوں کا دباﺅ ملکی سلامتی کیلئے بڑا چیلنج بن چکے ہیں ،بیرونی قرضوں کا سیلاب ،معاشی اداروں کی بدنظمی معیشت کو دیوالیہ کرنے کو ہے ،غربت افلاس کی بڑھتی صورتحال پر تشدد عوامی انقلاب کی راہ ہموار کرتی دکھائی دیتی ہے ،یہ حالات بہت بڑا سکیورٹی رسک ہیں ،حکومتی فیصلے ملکی سلامتی ،خود مختاری اور بقا کیلئے خطرہ بن چکے ہیں ،بزنس کے مواقع مشکل بنا دئیے گئے ہیں ،ملک اس وقت معاشی دیوالیہ پن کی طرف جا تا نظر آر ہا ہے ۔


ای پیپر