بھارت کی دراندازی پر اپوزیشن رہنماوں کا حکومت سے بڑا مطالبہ
کیپشن:   فوٹو بشکریہ فیس بک
26 فروری 2019 (13:47) 2019-02-26

اسلام آباد: بھارت کی دراندازی پر اپوزیشن رہنماوں نے قومی سلامتی کا اجلاس بلانے کا مطالبہ کر دیا۔

قومی اسمبلی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے خورشید شاہ نے کہا کہ قومی سلامتی کمیٹی اجلاس میں تمام سیاسی جماعتوں کی قیادت کو ایک ساتھ بلا کر بھارت کو سخت پیغام دیا جائے۔ تمام سیاسی جماعتیں اپنے اختلافات بھلا کر بھارت کے خلاف ایک ہیں۔

آصف زرداری کہتے ہیں بھارت کسی غلط فہمی میں نہ رہے، قوم کا ہر فرد افواج پاکستان کے ساتھ ہے، بھارت نے کوئی حرکت کی تو خمیازہ بھگتنے کے لیے تیار رہے۔

اپوزیشن لیڈر شہباز شریف نے بھارتی فضائیہ کے طیاروں کی دراندازی کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارت نے جنگ شروع کی تو انشاء اللہ نئی دہلی پر پاکستان کا پرچم لہرائے گا۔

بابر اعوان نے کہا کہ مودی کی سیاسی ارتھی جلنے والی ہے، پلوامہ ڈرامہ کے بعد انڈیا کے چانسلرز اور پروفیسر جان گئے ہیں، مودی کی ساری سازش الیکشن جیتنے کے لیے ہے۔

سندھ اسمبلی میں پی ٹی آئی کے پارلیمانی لیڈر حلیم عادل شیخ کہتے ہیں مودی کو صرف ٹماٹر کی سیاست آتی ہے۔ بھارت جنگی جنون میں آگے نکلا تو بڑا نقصان اٹھائے گا۔


ای پیپر