Photo Credit Yahoo

تاحیات نا اہلی کے بعد خواجہ آصف کا ردعمل سامنے آگیا ،اہم فیصلہ کر لیا
26 اپریل 2018 (16:04) 2018-04-26

اسلام آباد :اسلام آباد ہائی کورٹ نے اقامہ پر فیصلہ سناتے ہوئے وفاقی وزیر خارجہ خواجہ آصف کو تاحیات نا اہل قرار دیدیا ۔اس طرح مسلم لیگ ن کی ایک اور بڑی وکٹ گر گئی ۔اعلیٰ عدالت کی جانب سے خواجہ آصف کو 62ون ایف کے تحت تاحیات نا اہل قرار دیا گیا جس کے بعد وہ اب اپنے عہدے پر برقرار نہیں رہ سکتے ۔

خواجہ آصف نے اپنی نااہلی سے متعلق ہائی کورٹ کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کرنے کا اعلان کردیا ہے۔اپنے ایک انٹرویو میں خواجہ آصف نے کہا ہے کہ وہ اپنی نااہلی سے متعلق اسلام آباد ہائی کورٹ کے فیصلے کو سپریم کورٹ میں چیلنج کریں گے، ان کا کہنا تھا کہ عدالت میں اقامہ کو جواز بنانا کوئی کمال نہیں، کمال تو یہ ہوتا کہ میں نے اقامہ چھپایا ہوتا اور وہ عدالت میں پیش کرتے، حقیقت یہ ہے کہ 1991 سے میرا اقامہ اور بیرون ملک بینک اکائونٹس ظاہر ہیں۔

ان کا ذکر میرے انتخابی گوشواروں میں بھی ہے۔واضح رہے کہ اسلام آباد ہائی کورٹ نے مسلم لیگ (ن) کے سینئیر رہنما خواجہ آصف کو اقامہ رکھنے کی بنیاد پر آئین کی شق 62 ون ایف کے تحت نااہل قرار دے دیا ہے۔


ای پیپر