فائل فوٹو

ورلڈ بینک نے پاکستان کے ٹیکس نظام کو پیچیدہ قرار دیدیا
25 نومبر 2019 (15:28) 2019-11-25

اسلام آباد: ورلڈ بینک نے پاکستان کے ٹیکس نظام کو پیچیدہ قرار دے دیا، پاکستان میں ٹیکس دہندگان میں کمی کی یہ ایک بڑی وجہ ہے۔

ورلڈ بینک کے گروپ 'وی بی جی' کی رپورٹ کے مطابق ٹیکس نظام پیچیدہ ہونے کی وجہ سے تاجروں کو ایک سال میں 60 گوشوارے جمع کرانا پڑتے ہیں۔ پاکستان میں ٹیکس دہندگان میں کمی کی یہ ایک بڑی وجہ ہے۔

ورلڈ بینک کی رپورٹ کے مطابق پاکستان اپنی کل استطاعت سے نصف ٹیکس جمع کر پا رہا ہے۔ زیادہ تر دکاندار ٹیکس ادا نہیں کرتے اور حکومت کو بھی مسلسل ناکامی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ حکومت نے بھی زراعت، تعمیرات اور ٹیکسٹائل کے شعبوں میں خاطر خواہ مراعات دے رکھی ہیں۔


ای پیپر