Global pandemic, deadly virus, Pakistan, NCOC, lockdown
25 مارچ 2021 (22:23) 2021-03-25

 اسلام آباد:وفاقی وزیر اسد عمر نے کہا کہ  ملک میں 50 سال کی عمر کے افراد کی کورونا  ویکسینیشن کا عمل اپریل سے شروع ہوجائے گا،چین سے 70 لاکھ مزید کورونا ویکسین کی ڈوز خریدی جارہی ہیں تاکہ زیادہ سے زیادہ لوگوں کو ویکسین لگائی جاسکے ۔

اسد عمر نے کہا  کہ 70 لاکھ  کورونا ویکسین کی ڈوز اپریل میں پاکستان  پہنچنے کی توقع ہے،اپریل کے دوسرے ہفتے سے پچاس سال سے زائد عمر کے افراد کی ویکسین کا عمل شروع کر دیا جائے گا۔انہوں نے بتایا کہ چین سے سائنو فارم اور کین سینو ویکیسن کی خریداری کی جارہی ہے، چین سے پہلے خریدی گئی ویکیسن کی دو کھیپ رواں ماہ کے آخر تک پاکستان پہنچیں گی۔

کرونا ویکسینیشن سے متعلق تفصیلات بتاتے ہوئے اسد عمر نے کہا کہ اپریل میں ملنے والی 70 لاکھ خوراکوں میں سے چالیس لاکھ خوراکیں فنش پروڈکٹ ہیں جو تیار خوراکیں ہیں اور لوگوں کو اس کے شاٹ لگائے جائیں گے ،30 لاکھ خوراکیں خام مال کی صورت میں پاکستان کو ملیں گی۔ پیکنگ میں ملنے والی یہ خام مال ویکسین قومی ادارہ صحت کو دی جائے گی۔ جو اس کی حفاظت کی ذمہ دار ہو گی۔

انہوں نے بتایا کہ چین  کا وفد پاکستان کے دورے پر ویکسینیشن کی خوراکیں تیار کر کے پیکنگ میں معاونت دے گی۔پاکستان کی طرف سے خریدی جانے والی 60 ہزار کین سائینو ویکسین سنگل شاٹ ویکسین ہوں گی،یہ ایک خوراک پر مشتمل ویکسین ہے۔یاد رہے پاکستان میں کین سائینو ویکسین کے ٹرائل بھی کیے جا چکے ہیں۔


ای پیپر