Indian Farmer,Indian Kisan Sikh,Modi,New Dehli
25 مارچ 2021 (17:40) 2021-03-25

نئی دہلی:بھارتی کسانوں نے مودی سرکار کو ٹف ٹائم دینے کا فیصلہ کر لیا ،بھارتی سکھ کسانوں نے پورا بھارت جام کرنے کی حکمت عملی تیار لی ، کسانوں کے اعلان کے بعد بھارتی ایوان میں ہلچل مچ گئی ۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ تین ماہ سے احتجاج کرنے والے بھارتی سکھ کسان اتحاد کے صبر کا پیمانہ لبریز ہو گیا ،بھارتی کسانوں نے مودی کو ٹف ٹائم دینے کیلئے حکمت عملی تیار کر لی ،بھارتی کسانوں نے مودی سرکار کو جام کرنے کی تیاریاں مکمل کر لیں۔

بھارتی کسان سکھ اتحاد کے مطابق جمعہ کے روز پورا بھارت بند کرنے جا رہے ہیں ،دہلی کے اردگرد اور تمام داخلی راستوں پر کسان خواتین کی ایک بڑی تعداد جمع ہو چکی ہے ،مائیں شیر خوار بچوں کو بھی سا تھ لے آئی ہیں ،بھارت کسانوں نے فیصلہ کر لیا ہے کہ اب وہ مود ی سرکار کیساتھ دو دو ہاتھ کر کے ہی دم لینگے ۔

کسا ن اتحاد کے مطابق جمعہ احتجاج کے دوران پورا بھارت بند کردیں گے، کسانوں نے نئی دلی میں قائم رکاوٹیں ایک بار پھر توڑنے کا اعلان کر دیا ہے، بھارتی میڈیا کے مطابق کاشتکاروں نے مودی سرکار کو چیلنج کرتے ہوئے کہا ہے کہ پارلیمنٹ کے باہر فصلیں بیچ کر دکھائیں گے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق دہلی کے ارد گرد ٹکری ، سنگھو اور غازی پور بارڈرز پر خواتین کسانوں کی بڑی تعداد پہنچ چکی ہے، مشرقی پنجاب سے ٹکری باڈر پر خواتین شیر خوار بچوں کو بھی ساتھ لے آئیں،کسان خواتین کا کہنا ہے کہ کاشتکاروں کی تحریک نے نئی نسل کو اپنے حقوق کے لیے لڑنا سکھا دیا ہے،دھرنے میں موجود کارکنوں نے مطالبات کی منظوری تک ڈٹے رہنے کے عزم کا اظہار کیا ہے۔


ای پیپر