Corona virus kills 63 more Pakistanis, reports 3946 new cases
کیپشن:   فائل فوٹو
25 مارچ 2021 (09:47) 2021-03-25

لاہور: نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) کی جانب سے جاری اعدادوشمار کے مطابق عالمی وبا کی صورتحال پاکستان میں روز بروز خراب ہوتی جا رہی ہے۔ گزشتہ روز ملک بھر 63 افراد کی اموات سامنے آئیں جبکہ تین ہزار نو سو چھیالیس نئے کیس رپورٹ ہوئے۔

اموات میں حالیہ اضافے سے پاکستان میں کورونا وائرس سے جاں بحق ہونے والوں ک مجموعی تعداد چودہ ہزار اٹھائیس تک جا پہنچی ہے جبکہ اس مرض سے اب تک چھ لاکھ چالیس ہزار نو سو اٹھاسی افراد متاثر ہو چکے ہیں۔

این سی او سی کی جانب سے جاری ڈیٹا کے مطابق پاکستان میں عالمی وبا کے فعال کیسوں کی تعداد اس وقت سینتیس ہزار نو سو پچاسی ہے جبکہ پانچ لاکھ اٹھاسی ہزار نو سو پچھتر افراد اس وبائی مرض سے صحت یاب ہو چکے ہیں۔

عالمی وبا کی وجہ سے سب سے زیادہ نقصان صوبہ پنجاب کو اٹھانا پڑا جہاں اب تک چھ ہزار ننانوے افراد جاں بحق ہو چکے ہیں۔ ملک کے دوسرے حصوں کی بات کی جائے تو صوبہ سندھ میں چار ہزار چار سو بیاسی، خیبر پختونخوا دو ہزار دو سو چھیالیس، اسلام آباد میں پانچ سو چون، گلگت بلتستان میں ایک سو تین، بلوچستان میں دو سو پانچ اور آزاد کشمیر میں تین سو انتالیس شہری موت کی وادی میں جا چکے ہیں۔

ڈیٹا کے مطابق اسلام آباد میں کورونا کیسوں کی تعداد ترپن ہزار چھ سو چوراسی، خیبر پختونخوا اکیاسی ہزار سات سو ستاسی، سندھ دو لاکھ تریسٹھ ہزار آٹھ سو پندرہ، پنجاب دو لاکھ پانچ ہزار تین سو چودہ، بلوچستان انیس ہزار تین سو پچانوے، آزاد کشمیر بارہ ہزار سولہ اور گلگت بلتستان میں چار ہزار نو سو ستتر افراد عالمی وبا کے شکنجے میں آ چکے ہیں۔

خیال رہے کہ پاکستان میں معمر شہریوں کو عالمی وبا کورونا وائرس سے بچاؤ کے ٹیکے لگانے کا عمل جاری ہے۔ پہلے مرحلے میں صرف طبی عملے کی ویکسی نیشن کی گئی تھی۔

تاہم اب عام شہریوں کو حفاظتی ٹیکوں کی فراہمی کا عمل شروع کر دیا گیا ہے، اس سلسلے میں سینئر سٹیزنز کو ترجیح دی گئی ہے۔

اس سلسلے میں پاکستان بھر میں ایسے سینکڑوں ویکسی نیشن سینٹرز قائم کئے جا چکے ہیں جہاں بزرگ شہریوں کو ادویات فراہم کی جا رہی ہیں۔ یہ تمام عمل ڈیجیٹل طریقے سے کنٹرول کیا جا رہا ہے۔

حفاظتی ٹیکوں کیلئے صوبہ پنجاب میں ایک سو انانوے، صوبہ سندھ میں چودہ، خیبرپختونخوا میں دو سو اسی، صوبہ بلوچستان میں چوالیس، اسلام آباد میں چودہ، آزاد کشمیر میں پچیس جبکہ گلگت بلتستان میں سولہ مراکز قائم کئے گئے ہیں۔


ای پیپر