publicly slapped,Karachi police,arrest,cases,registered
24 نومبر 2020 (20:45) 2020-11-24

کراچی : بھرے مجمع میں پولیس اہلکاروں کو یرغمال بنا کر سر عام تھپڑ رسید کرنے والا ملزم آخر کام قانون کی گرفت میں آگیا ٗ ملزم کے خلاف اس سے قبل بھی دہشت گردی اور منشیات فروشی کے مقدمات درج ہیں۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے مومن آباد کے علاوہ میں گزشتہ دنوں ایک عجیب واقعہ پیش آیا جب ساجد کاچک نامی ایک شخص نے پولیس اہلکاروں کو بھرے بازار میں یرغمال بنا کر بٹھا لیا اور اس دوران اس نے پولیس والوں کو دشنام طرازی کا نشانہ بنایا اور ایک پولیس اہلکار کے بھرے بازار میں زوردار طمانچہ بھی رسید کر دیا۔ اس موقع پر کراچی کی پولیس حسرت و یاس کی تصویر بھی بیٹھی رہی اور وہ ملزم وہاں سے دندناتا ہوا فرار ہو گیا۔

اس واقعہ کی ویڈیو جیسے ہی سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی تو کراچی پولیس نے ملزم کی تلاش کی کارروائی شروع کر دی۔ کئی دنوں کی محنت کے بعد آخر کار پولیس نے ملزم ساجد کاچک کو گرفتار کر لیا جو اس دن نے روپوش ہو چکا تھا اور پولیس اسے تلاش نہیں کر پا رہی تھی۔

مومن آبا د کی پولیس نے بڑی محنت کے بعد ساجد کاچک کو گرفتار کیا تو یہ معلوم ہوا کہ یہ کوئی عام ملزم نہیں بلکہ اس سے قبل بھی ساجد کیخلاف دہشت گردی ٗ منشیات فروشوں اور پولیس مقابلوں کے مقدمات درج ہو چکے ہیں۔ پولیس نے مزید تفتیش جاری رکھی ہوئی۔


ای پیپر