شہباز شریف اور عمران علی پر منی لانڈرنگ کے الزامات، ڈیلی میل کے وکلاء نے بڑا اعتراف کر لیا
سورس:   فائل فوٹو
24 فروری 2021 (19:26) 2021-02-24

لندن: برطانوی اخبار ڈیلی میل کے وکلاء نے برطانوی عدالت میں اعتراف کر لیا کہ مسلم لیگ (ن) کے صدر و سابق وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف اور عمران علی پر منی لانڈرنگ کے الزامات نہیں لگائے۔

برطانوی اخبار ڈیلی میل کے وکلاء نے برطانوی عدالت میں اعتراف کیا کہ شہباز شریف اور عمران علی پر منی لانڈرنگ کے الزامات نہیں لگائے۔ 

جسٹس میتھیو نکلین نے کہا کہ اخبار کے مضمون کا مرکز شہباز شریف تھے جبکہ عمران علی کے بارے میں لکھا گیا کہ انہیں زلزلہ زدگان فنڈ سے ایک ملین پاؤنڈ ملے اور اخبار کے مطابق اس رقم کا عمران علی کو علم تھا کہ یہ غبن شدہ پیسہ ہے۔ 

جسٹس نکلین نے کیس کیلئے ’چیز لیول ون‘ کا تعین کیا جس کا مطلب سنگین درجے کی ہتکِ عزت ہے اور اب اخبار کو لگائے گئے الزامات کے ثبوت دینا ہوں گے۔

جسٹس نکلین نے ریمارکس دیے کہ اخبار نے سلیمان شہباز کی تردید غیر واضح طریقے سے شائع کی۔

واضح رہے کہ 14 جولائی 2019 کو برطانوی اخبار ڈیلی میل نے دعویٰ کیا تھا کہ سابق وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف کے خاندان نے زلزلہ متاثرین کو ملنے والی برطانوی امداد میں چوری کی۔

رپورٹ میں کہا گیا تھا کہ شہباز شریف کے دور میں برطانوی امدادی ادارے نے لگ بھگ 50 کروڑ پاؤنڈ پنجاب کو دیے۔

بشکریہ(نیو نیوز)


ای پیپر