مشال خان کے والد نے عدالت کے فیصلے کیخلاف ہائیکورٹ میں اپیل دائر کر دی
24 فروری 2018 (17:08) 2018-02-24

پشاور: مردان کی عبدالولی خان یونیورسٹی میں توہین مذہب کے الزام میں قتل کیے گئے طالبعلم مشال خان کے والد اقبال خان نے بھی اپنے بیٹے کے قتل کیس میں انسداد دہشت گردی عدالت کے فیصلے کے خلاف پشاور ہائی کورٹ میں اپیلیں دائر کردیں۔

تفصیلات کے مطابق مقتول مشال خان کے والد اقبال خان کی طرف سے پشاور ہائی کورٹ میں 5 اپیلیں دائر کی گئی ہیں، جن میں عمر قید پانے والے 5 مجرمان کو سزائے موت دینے کی اپیل اور 4 سال کی سزا پانے والے مجرموں کی سزا ؤ ں میں اضافے کی درخواست کی گئی ہے۔اقبال خان نے یہ اپیل بھی دائر کی ہے کہ سزائے موت پانے والے مرکزی مجرم عمران علی کو جس سیکشن میں بری قرار دیا گیا ہے۔

اس کے خلاف دوسری دفعات کے تحت بھی مقدمہ چلایا جائے۔جبکہ 26 ملزمان کی بریت کے خلاف بھی اپیل کی گئی ہے۔اس سے قبل مقتول کے بھائی ایمل خان نے بھی 26 ملزمان کی بریت کے خلاف اپیل دائر کی تھی۔


ای پیپر