چین نے امریکہ پر زور دیا تھا کہ وہ پاکستان کی مدد جاری رکھے
24 دسمبر 2018 (17:04) 2018-12-24

واشنگٹن:امریکی اسٹیٹ ڈیپارٹمنٹ کی دستاویزات میں انکشاف ہوا ہے کہ چین نے امریکہ پر زور دیا تھا کہ وہ پاکستان کے ایٹمی پروگرام کے باوجود اس کی مدد جاری رکھے  

امریکی اسٹیٹ دیپارٹمنٹ کی طرف سے 80ء کی دہائی کی دستاویزات جاری کی گئی ہیں جس کے مطابق افغان جنگ کی وجہ سے پاکستان کو ایٹمی پروگرام جاری رکھنے میں مدد ملی۔ چین کے سینٹرل ملٹری کمیشن کے سابق چیئرمین ڈینگ شیاپنگ نے امریکہ پر زور دیا تھا کہ وہ پاکستان کے نیوکلیئر پروگرام کے باوجود اس کی مدد جاری رکھے ۔

اگست 1984 کی خفیہ دستاویز پر مشتمل رپورٹ کے مطابق امریکہ کو اس وقت یہ معلوم ہوگیا تھا کہ پاکستان نے ایٹمی ہتھیار بنانے کی صلاحیت حاصل کرلی۔پاکستانی حکام کی جانب سے انکار کے باوجود امریکہ کو معلوم تھا کہ پاکستان ایٹمی ہتھیار کے ایک پرفیکٹ ڈیزائن کو تیار کرنے کی جانب بڑھ رہا ہے۔

رپورٹ کے مطابق افغان جنگ میں پاکستان کی ضرورت کے پیش نظرامریکہ مجبورتھا کہ وہ پاکستان کے ایٹمی ہتھیاروں سے متعلق سرگرمیوں کو برداشت کرے اور دنیا میں اپنے ایٹمی ہتھیاروں کے عدم پھیلاؤ کی ساکھ کو خراب کرے جس کی وجہ سے اسے پاکستان کی سیکیورٹی امداد کے لیے کانگریس کے اقدامات کے خلاف جانا تھا ۔ ایسا نہ کرنے کی صورت میں انڈیا ٗ پاکستان کے ایٹمی پروگرم پر حملہ بھی کرسکتا تھا ۔


ای پیپر