زرتاج گل اور یاسمین راشد میں سے سچا کون ؟
24 اگست 2020 (17:17) 2020-08-24

لاہور : زرتاج گل اور ڈاکٹر یاسمین راشد کے سابق وزیر اعظم نواز شریف کی میڈیکل رپورٹس سے متعلق متضاد بیانات سے حکومتی پارٹی میں فاصلوں کی خبروں کو تقویت دیدی۔ جہاں ایک طرف وفاقی وزیر برائے موسمیاتی تبدیلی زرتاج گل کہتی نظر آئیں کہ نواز شریف کی میڈیکل رپورٹس ابھی تک حکومت کو نہیں دی گئیں وہیں پر وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد نے ان تمام خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ  نوازشریف کی رپورٹس میں کوئی جعل سازی نہیں ہوئی، اس کی وجہ یہ ہے کہ سیمپلز کی باقاعدہ تصدیق سرکاری کے علاوہ نجی لیبز سے بھی کی گئی اور تقریبا سب کی رپورٹس ایک جیسی آئیں۔

ایک انٹرویو میں زرتاج گل وزیر نے کہا کہ توشہ خانہ کیس میں بھی عدالت نے نواز شریف کا پوچھا جبکہ نواز شریف کی میڈیکل رپورٹس حکومت کو ابھی تک نہیں دی گئیں۔  وزیر اعظم پورٹل پر شکایات ماحولیات سے متعلق بھی ہوتی تھیں اور ہمیں شکایات موصول ہوئی تھیں کہ کہاں کہاں پر درخت کاٹے جا رہے ہیں۔ 

جبکہ ڈاکٹر یاسمین راشد نے اپنے انٹرویو میں کہا کہ اس وقت دماغ میں جو شکوک پیدا ہورہے ہیں وہ جو ن لیگ اور نوازشریف نے جو رویہ اختیار کیا اس سے تکلیف ہورہی ہے، یہ ایک اخلاقی تقاضہ ہے کہ مجرم ہونے کے باوجود انہیں سہولیات دیں اور ان کا علاج کرایا لیکن  ان ساری باتوں کے بعد اس طرح کی باتیں ہونا تکلیف دہ چیزیں ہیں۔اگر نوازشریف مقررہ وقت پر واپس آجاتے یا پھر وہاں اپنا علاج کراتے تو یہ شکوک و شبہات پیدا ہی نہیں ہوتے۔


ای پیپر