وزیراعظم عمران خان کی سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے ملاقات
23 اکتوبر 2018 (17:12) 2018-10-23

ریاض: وزیراعظم عمران خان نے سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے ملاقات کی ‘جس میں دو طرفہ تعاون کو مزید بڑھانے اور عالمی سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا ۔

منگل کے روز وزیراعظم عمران خان نے سعودی دارالحکومت ریاض میں خادمین حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے ملاقات کی ‘جس میں دونوں رہنماﺅں نے دو طرفہ تعلقات‘ علاقائی ‘ عالمی سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا ۔ وزیراعظم ہاوس کے مطابق ملاقات میں دونوں رہنماوں نے باہمی دلچسپی کے امور‘ تجارت‘ سرمایہ کاری اور اقتصادی تعلقات کے امور پر بھی تفصیلی بات چیت کی۔

وزیراعظم اور سعودی فرمانروا نے دو طرفہ تعاون کو مزید بڑھانے کرنے کیلئے اپنی خواہش کا اظہار کیا۔اس موقع پر وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی، وزیر خزانہ اسد عمر، وزیر اطلاعات چودھری فواد حسین ،مشیرتجارت عبد رزاق داود وزیر مملکت ہارون شریف اور سعودی عرب میں پاکستان کے سفیر خان ھشام بن صدیق بھی ملاقات میں موجود تھے۔

ملاقات سے قبل ریاض میں سرمایہ کاری کا نفرنس سے خطاب میں وزیر اعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ ہم جو بھی اصلاحات کریں گے ان کے نتائج آنے میں وقت لگے گا‘فی الحال ہمیں فوری طور زرمبادلہ کے ذخائر بڑھانے ہیں‘جس کیلئے ہم سرمایہ کاروں کو مراعات فراہم کر رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں سرمایہ کاری کیلئے یہ بہترین وقت ہے‘قرضے ادا کرنے کیلئے رقم کی ضرورت ہے۔

پاکستان میں ایک کروڑ گھروں کی کمی ہے۔ ملک میں سرمایہ کاری کیلئے سازگار ماحول بنانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ ہم نے نوجوانوں کے لیے نوکری کے مواقع پیدا کرنے ہیں۔وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ پاکستان ان 2 ممالک میں شامل ہے جو نظریے کی بنیاد پر بنے۔ نیا پاکستان قائد اعظم کے اصولوں کے مطابق بنانا ہے، ہمیں فوری طور پر کرنٹ خسارے کے مسئلے کا سامنا ہے۔ منی لانڈرنگ ترقی پذیر ممالک میں بڑا مسئلہ ہے، ہم جو بھی اقدامات کریں گے آنے والے دنوں پر اس کا مثبت اثر ہوگا۔


ای پیپر