فائل فوٹو

کے الیکٹرک نے وزیراعلیٰ کے احکامات ہوا میں اڑا دیئے
23 مارچ 2020 (11:44) 2020-03-23

کراچی: کراچی میں بجلی کی تقسیم کار نجی کمپنی کے الیکٹرک نے  کورونا وائرس کے باعث شہر میں لاک ڈاؤن کی وجہ سے بل معاف کرنے اور 10 ماہ کی اقساط کرنے سے انکار کر دیا۔

  وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے صوبے میں کورونا وائرس کے روک تھام کے لیے آج سے لگائے گئے لاک ڈاؤن کے پیش نظر  بجلی تقسیم کرنے والی کمپنیوں اور سوئی سدرن گیس کمپنی کو بِلوں میں رعایت کرنے کی ہدایت کی تھی۔

وزیر اعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ جن لوگوں کا بجلی کا بل 5 ہزار روپے تک ہے ان سے اس ماہ بل نہ لیا جائے اور اسے اگلے 10 ماہ میں قسطوں کی صورت میں وصول کیا جائے۔ 

مراد علی شاہ نے سوئی سدرن اور بجلی تقسیم کرنے والی کمپنیوں کو اگلے دو ماہ میں بجلی اورگیس کا کوئی بھی کنکشن نہ کاٹنے کی بھی ہدایت کی تھی۔

تاہم کے الیکٹرک نے وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی ہدایت ماننے سے انکار کر دیا ہے۔

 ترجمان کے الیکٹرک کا کہنا ہے کہ 4 ہزار روپے سے کم کے بلوں کی ادائیگی کی تاریخ بڑھا دی گئی ہے اور  صارفین 10 اپریل تک اپنے بل جمع کرا سکتے ہیں۔

واضح  رہے کہ پاکستان میں کورونا وائرس کے کل کیسز کی تعداد 796 ہو گئی ہے جب کہ 5 افراد جاں بحق بھی ہو چکے ہیں۔


ای پیپر