ٹوئٹر پر لفظی جنگ، محمد حفیظ بھی دل کی بات زبان پر لے آئے
سورس:   فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر
23 فروری 2021 (18:31) 2021-02-23

کراچی: پاکستان کرکٹ ٹیم کے سینئر آل راؤنڈر اور پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) میں لاہور قلندرز کی نمائندگی کرنے والے محمد حفیظ نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر چند روز قبل سرفراز احمد کیساتھ ہونے والی ’لفظی جنگ‘ سے متعلق اپنا ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ جو کچھ بھی ہوا اس پر افسوس ہے، سرفراز اور میں ایک دوسرے کی بہت عزت کرتے ہیں۔ 

تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کے دوران جب ان سے یہ پوچھا گیا کہ آپ نے ٹوئٹرمحمد رضوان کی تعریف میں ٹویٹ کی تو اس کے بعد سرفراز احمد اور آپ کے درمیان جملوں کا تبادلہ کیوں ہوا؟ جس پر انہوں نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ میں ایک سینئر کھلاڑی ہوں اور اپنے تام جونیئر ساتھیوں کی کارکردگی دیکھ کر ناصرف بہت خوش ہوتا ہوں بلکہ میں ہمیشہ انہیں دلاسہ بھی دیتا ہوں اور ان کی ہمت بڑھاتا ہوں اور ایسا ہی میں نے اس ٹوئٹ میں بھی کیا تھا، پاکستان کرکٹ میں گزشتہ دو سے تین سال میں جو چیزیں سب سے نمایاں ہوئی ہیں وہ شاہین شاہ آفریدی کاٹاپ لیول کا باؤلر بن کر سامنے آنا اور محمد رضوان کا بہترین بلے باز بن کر میچز جتوانا ہے اور اگر میں شاہین کی تعریف کرتا ہوں تو اس کا یہ مطلب نہیں کہ باقیوں کو غلط کہہ رہا ہوں بلکہ میرا مقصد اپنے جونیئرز کو حوصلہ دینا ہوتا ہے۔ 

محمد حفیظ نے کہا کہ سابق کپتان سرفراز احمد ہوں یا کوئی اور ساتھی کرکٹر، ، جب بھی کوئی پاکستان کیلئے اچھا پرفارم کرے گا، میں اس کی عزت کروں گا، میرے نزدیک سرفراز اتنا ہی اہم ہے جتنا کوئی اور ساتھی کھلاڑی، جو پاکستان کی عزت کرے گا میں اس کی عزت کروں گا،  سب سے پہلے تو میں میڈیا سے گزارش کروں گا کہ ٹوئٹر پر ہونے والے معاملے میں کچھ بھی نہیں ہے بلکہ میں اور سرفراز احمد ایک دوسرے کی بہت عزت کرتے ہیں، لہٰذا اس معاملے کو منفی طور پر مت لیں، میرے یا اس کے دل میں کوئی خفگی نہیں ہے۔ 

قومی ٹیم کے سابق کپتان نے کہا کہ ہم سب پاکستان کیلئے کھیلتے ہیں اور پاکستان کیلئے کارکردگی دکھانا ہی ہمارا مقصد ہے،  میرے دل میں پہلے کوئی بات تھی اور نہ ہی مستقبل میں کوئی بات ہو گی، میرا پورا کیرئیر کا جائزہ لیں گے تو آپ کو معلوم ہو گا کہ آج تک اپوزیشن کے کسی کھلاڑی کیساتھ میرا کوئی مسئلہ ہوا اور نہ ہی اپنی ٹیم کے کسی ساتھی کیساتھ، لیکن ایک ہفتے یا دس روز میں جو کچھ ہوا وہ غلط ہوا، البتہ میری سوچ بالکل بھی غلط نہیں تھی۔ 


ای پیپر