election tribunal,ecp,nosheen iftikhar,na-75,daska,maryam nawaz
23 فروری 2021 (14:23) 2021-02-23

اسلام آباد : ضمنی انتخاب میں این اے 75 ڈسکہ سے مسلم لیگ (ن) کی امیدوار نوشین افتخار نے سنگین الزامات عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈی ایس پی نے گولی مارنے کی دھمکی دی۔میرا دوپٹہ کھینچ کر تضحیک کا نشانہ بنایا گیا۔

الیکشن کمیشن آف پاکستان میں حلقہ این اے 75 میں پولنگ بیگز اور عملہ غائب ہونے سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی جس دوران مسلم لیگ(ن) ڈسکہ سے ٹکٹ ہولڈر نوشین افتخار نے اپنا بیان ریکارڈ کروایا ۔ انہوں نے اپنے بیان میں الزامات کی بوچھاڑ کرتے ہوئے کہا کہ پولیس والوں نے میری چادر کھینچی ٗ مجھ پر ڈنڈے برسائے گئے۔(ن) لیگ سے حلقے سے پانچ بار جیت چکی ہے۔یہ مسلم لیگ(ن) کا گڑھ ہے۔مجھے امید نہیں تھی کہ ڈسکہ میں لوگ قتل ہوں گے۔یہ این اے 75 کے لوگوں کی جنگ ہے۔

نوشین افتخار نے کہا کہ ڈی ایس نے مجھے کہا کہ میں آپ کو گولی مار دوں گا۔ ڈسکہ میں عوام کے ووٹوں کے ساتھ چوری ہوئی ہے یہ صرف ایک حلقہ کی پولنگ کی مسئلہ نہیں بلکہ اب یہ این اے 75 کے لوگوں کی جنگ ہے۔ 


ای پیپر