file photo

کچھ طاقتیں کورونا کے خلاف ویکسین لانے نہیں دے رہیں: ٹرمپ
23 اگست 2020 (12:09) 2020-08-23

واشنگٹن : امریکی صد ر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ اسٹیبلشمنٹ یا کوئی اور کورونا کے خلاف ویکسین لانے نہیں دے رہاجبکہ اسپیکر نینسی پلوسی امریکی صدر کے بیان پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ فوڈ اینڈ ڈرگ اتھارٹی کو سیاست زدہ نہ کیا جائے۔

دوائیاں موثرہونے کی بنیاد پر تیار کی جاتی ہیں وائٹ ہائوس کے اعلامیوں پر نہیں۔غیر ملکی خبر رساں ا دارے کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ کورونا وائرس کے خلاف ویکسین کو جان بوجھ کر تاخیر کا شکار کیا جا رہا ہے اور کوئی اس کے پیچھے ہے جو ویکسین میں رکاوٹ ڈال رہا ہے۔

 انہوں نے کہا کہ ویکسین کا معاملہ 3 نومبر کے صدارتی انتخابات تک تاخیر کا شکار کیا جا رہا ہے۔دوسری جانب اسپیکر نینسی پلوسی امریکی صدر کے بیان پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ فوڈ اینڈ ڈرگ اتھارٹی کو سیاست زدہ نہ کیا جائے۔ دوائیاں موثرہونے کی بنیاد پر تیار کی جاتی ہیں وائٹ ہائوس کے اعلامیوں پر نہیں۔

انہوں نے کہا کہ امریکی صدر کی جانب سے ایسا بیان خطرناک اور ناقابل برداشت ہے۔دو ہفتے قبل امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے امریکی دوا ساز کمپنی موڈرنا کے ساتھ کورونا ویکسین کا معاہدہ کیا تھا۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے معاہدے کے بعد کہا کہ امریکی دوا ساز کمپنی کے ساتھ کورونا ویکسین کی 100 ملین ڈوز کا معاہدہ ہوا ہے جو 100 ملین کورونا ویکسین تیار کر کے امریکی حکومت کے حوالے کرے گی۔انہوں نے کہا تھا کہ 3 دیگر دوا ساز کمپنیوں کے ساتھ بھی ہماری شراکت داری ہے جبکہ جولائی کے آخر سے امریکہ میں کورونا کیسز میں 20 فیصد کمی ہوئی ہے۔


ای پیپر