نائیجیریا میں 13 سالہ بچے کو توہین مذہب پر 10 سال کی سزا 
22 ستمبر 2020 (19:57) 2020-09-22

ابوجا : یونیسف نےنائیجیریا کی شرعی عدالت کی طرف سے13 سالہ بچے کو توہین مذہب کے الزام میں 10 سال کی سزاپر شدید احتجاج کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق نائیجیریا کی کانو سٹیٹ کی شرعی عدالت کی طرف سے تیرہ سالہ عمر فاروق کو توہین مذہب کے الزام میں دس سال کی سزا سنائی گئی ہے۔ اس پر الزام ہے کہ اس نے اپنے ایک دوست سے گفتگو کے دوران اللہ کے حوالے سے نازیبا الفاظ کا استعمال کیا تھا۔ عمر فاروق کو یہ سزا گزشتہ ماہ 10 اگست کو سنائی گئی تھی۔

یونیسف کے بچوں کے حقوق کی ایجنسی کا کہنا ہے کہ عمر فاروق کو سنائی جانے والی سزا افریقن چارٹر آف رائٹس اور نائجیریا کے قانون کی خلاف ورزی ہے۔ عدالت کی طرف سے عمر فاروق کو بالغوں والی سزا دی گئی ہے۔


ای پیپر