فوٹو سکرین شوٹ

محسن عباس نے اہلیہ کے الزامات مسترد کرتے ہوئے ثبوت مانگ لئے
22 جولائی 2019 (11:04) 2019-07-22

لاہور: اداکار اور میزبان محسن عباس کا اہلیہ فاطمہ سہیل پر تشدد کا معاملہ، محسن عباس اہلیہ کی جانب سے لگائے الزامات پر کھل کر سامنے آگئے۔

پریس کانفرنس میں کہا اہلیہ نے کیچڑ اچھالا، تشدد کی میڈیکل رپورٹ کہاں ہے؟ ایک کروڑ یا پچاس لاکھ لینے کا الزام بھی مسترد ، اہلیہ سے ثبوت مانگ لئے۔ محسن عباس نے کہا ساتھ نبھانے کی دونوں نے کوشش کی، لیکن کامیاب نہ ہوسکے۔ شادی کے چند روز بعد ہی فاطمہ سہیل کے جھوٹ سامنے آنے لگے تھے۔ مجھے کہیں کا بتا کر کہیں اور چلی جاتی تھی۔

دوسری جانب فاطمہ سہیل نے تھانے میں وکیل کے ذریعے شوہر کے خلاف تشدد کا مقدمہ درج کرانے کی درخواست جمع کرا دی۔

نیونیوز سے گفتگو کرتے ہوئے اے ایس آئی عبد الرزاق نے کہا کہ مدعی کے بیان ریکارڈ کرانے اور میڈیکل تک مقدمہ درج نہیں کر سکتے۔

اس سے پہلے فاطمہ سہیل نے الزام لگایا کہ محسن عباس کو ماڈلز کے ساتھ رنگ رلیاں مناتے رنگے ہاتھوں پکڑا، شرمندہ ہونے کے بجائے اداکار مجھے مارنے پیٹنے لگا، فاطمہ سہیل نے فیس بُک پر تشدد کی تصاویر شئیر کیں اور لکھا امید سے ہونے کے باوجود بھی محسن نے مجھے بالوں سے پکڑ کر گھسیٹا، لاتیں ماریں اور چہرے پر گھونسوں کی بارش بھی کی۔

شوہر کے ڈر سے فیملی کو نہیں بتایا، بہت ظلم برداشت کرلیا، لیکن اب نہیں کر سکتی۔


ای پیپر