Asad Umar, Federal minister, PML-N, PPP, Peshawar
21 نومبر 2020 (11:12) 2020-11-21

اسلام آباد: وفاقی وزیر اسد عمر نے ن لیگ اور پیپلز پارٹی کو آئینہ دکھا دیا ، انہوں نے کہا کہ ایک طرف ن لیگ آزاد کشمیر اور پیپلز پارٹی سندھ میں لاک ڈاوں لگاتے ہیں لیکن وہ پشاور میں جلسے کے لیے بضد ہیں۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر نے ن لیگ اور پیپلز پارٹی پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ مسلم لیگ ن کی حکومت نے آزاد کشمیر میں 2 ہفتوں کیلئے مکمل لاک ڈاؤن کا اعلان کر دیا، جبکہ پیپلزپارٹی کی سندھ حکومت نے کراچی کے 4 اضلاع میں سمارٹ لاک ڈاؤن کر دیا۔ لیکن دونوں جماعتوں نے اصرار کیا ہے کہ پشاور جلسہ ضرور ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ دوغلے پن کی اس سے واضح مثال نہیں مل سکتی۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ 2013 میں پاکستان تحریک انصاف نے پشاور کی 4 اور 2018 میں 5 سیٹیں جیتیں۔ اگلے الیکشن میں بھی یہی ہونا ہے، انہوں نے کہا کہ پشاور عمران خان کا شہر ہے۔ اپوزیشن والے ایسے حالات میں جلسہ کرکے شاید پشاور کے عوام سے بدلہ لینا چاہتے ہیں۔

واضح رہے کہ ملک میں عالمی وبا سنگین صورتحال اختیار کر چکی ہے۔ 24 گھنٹوں کے دوران عالمی وبا سے ہلاکتیں اور مثبت کیسز چار ماہ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئے ہیں۔

ملک میں مزید 42 افراد جان کی بازی ہار چکے ہیں جس کے بعد اموات کی مجموعی تعداد 7 ہزار، 603 ہوگئی، 2 ہزار، 843 نئے کیس رپورٹ ہوئے، متاثرین کی تعداد 3 لاکھ، 71 ہزار، 508 تک جا پہنچی ہے۔ 3 لاکھ، 28 ہزار، 931 مریض وبا کو شکست دیکر صحت یاب ہو چکے ہیں۔

این سی او سی کے مطابق اسی فیصد کیسز گیارہ بڑے شہروں سے رپورٹ ہوئے۔ کراچی کے 4 اضلاع میں اسمارٹ لاک ڈاؤن اور 2 میں مائیکرو اسمارٹ لاک ڈاؤن کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

صوبائی حکومتوں کو ہدایت کی گئی ہے کہ بازاروں، شاپنگ مالز، پبلک ٹرانسپورٹ، ریسٹورنٹس میں ایس او پیز اور ماسک کو لازم قرار دیں۔


ای پیپر