واٹس ایپ کی نئی پابندی نے ہر کسی کو مشکل میں ڈلا دیا
کیپشن:   Image Source : GRU سورس:   
21 جنوری 2019 (19:55) 2019-01-21

نیو یارک:دورہ جدید میں ٹیکنالوجی نے صورتحال بدل کر رکھ دی ہے ،کسی کو کوئی پیغام بھیجنا اتنا آسان پہلے کبھی نہیں تھا جتنا آج کے دور میں مختلف ایپ نے کر دیا ہے ، واٹس ایپ نے آتے ہی ہر طر ف ہلچل سی مچا دی ،پیغام رسانی میں جتنی آسانی واٹس ایپ نے مہیا کی شاید ہی کسی اور موبائل ایپ نے کی ہوگی ،جہاں اس کا فائدہ ہو رہا ہے وہیں کچھ لوگوں نے اس کا غلط استعمال بھی شروع کر دیا ،جس کے پیش نظر اب واٹس ایپ نے ایک سے زیادہ افراد کو پیغام بھیجنے کے پہلے والے طریقہ کار پر پابندی لگا دی ہے ۔

پیغام رسانی کے مقبول ایپواٹس ایپ“نے افواہوں کی روک تھام کے لیے اپنے صارفین پر ایک نئی پابندی عائد کر دی ہے۔ دنیا میں پیغام رسانی میں آسانی کے باعث افواہوں پر قابو رکھنا انتہا ئی مشکل کام ثابت ہو رہا ہے۔پیغام رسانی کے مقبول ترین پلیٹ فارم واٹس ایپ نے اسی مشکل پر قابو پانے کے لیے یہ پابندی عائد کردی ہے کہ صارف ایک پیغام پانچ لوگوں یا گروپس سے زائد میں فارورڈ یعنی آگے نہیں بھیج سکتا۔

صارفین کو 5 لوگوں سے زائد لوگوں کو پیغامات بھیجنے کے لیے پیغام کو کاپی کر کے ایک ایک نمبر پر بھیجنا ہوگا۔ واٹس ایپ کے ترجمان کے مطابق یہ پابندی واٹس ایپ کی جانب سے دنیا بھر میں ان کے پلیٹ فارم سے افواہوں کی روک تھام کے لیے عائد کی گئی۔ واٹس ایپ کے ترجمان کے مطابق فارورڈڈ پیغامات کی تعداد کی حد طے کرنے کے بعد سے دنیا بھر میں آگے بھیجے جانے والے پیغامات کی تعداد میں خاطر خواہ کمی نظر آئی ہے۔

اس سے قبل واٹس ایپ پر صارف ایک وقت میں 20 لوگوں کو میسج فارورڈ کرسکتا تھا۔پابندی ایک ایسے وقت میں سامنے آئی ہے جب واٹس ایپ اور فیس بک کی دیگر سروسز افواہوں اور پروپیگینڈا پھیلانے کی الزامات کے زد میں ہیں۔ واٹس ایپ نے اسی پالیسی کے تحت انڈیا میں یہی پابندی 6 ماہ پہلے لگائی تھی۔


ای پیپر