Siraj-ul-Haq,jamat e islami,build,full-fledged,rally
21 دسمبر 2020 (18:38) 2020-12-21

لوئر دیر :امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ  آنے والی نسلوں کے لیے محفوظ اور مضبوط پاکستان بنانے کے لیے جماعت اسلامی نے بھرپور تحریک کا آغاز کیا ہے جس کے دوسرے فیز کا آغاز 25دسمبر کو گوجرانوالہ میں بھرپور جلسہ سے ہو گا۔کرونا کی وبا کے باعث چار ہفتوں کے لیے جلسے جلوسوں کو معطل کر دیا تھا۔

ایک بیان میں سینیٹر سراج الحق کا کہنا تھا کہ یہ بات روز روشن کی طرح واضح ہو چکی ہے کہ ملک پر گزشتہ7دہائیوں سے مسلط اشرافیہ عوام کے دکھ درد کا مداوا نہیں۔ محلات میں رہنے والے حکمران طبقہ نے آج تک پاکستان کو اسلامی فلاحی مملکت بنانے کے لیے کوئی قدم نہیں اٹھایا، بلکہ انھوں نے اس راہ میں روڑے اٹکانے کی بھی بھرپور کوشش کی۔

سراج الحق نے کہا  کہ محلات میں رہنے والے حکمرانوں کو عوام کے مسائل کا ادراک نہیں ہو سکتا۔ پی ٹی آئی نے سابقہ ادوار کی داخلہ و خارجہ پالیسیوں کو پوری تندہی سے جاری رکھا ہوا ہے ۔ قوم کو ریاست مدینہ اور تبدیلی کے نعروں پر دھوکا دیا گیا۔ عوام جان چکے ہیں کہ سٹیٹس کو سے نجات حاصل کیے بغیر ملک کو پٹڑی پر ڈالنا ممکن نہیں۔ زراعت، صنعت، تعلیم و صحت تباہی کے دہانے پر ہیں، عدالتوں اور تھانوں میں غریبوں کی کوئی شنوائی نہیں۔

سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ پی ٹی آئی کی حکومت نے ریاست مدینہ اور تبدیلی کے نعروں پر عوام کو دھوکہ دیا۔ اقتدار میں آنے کے پہلے روز سے لے کر آج تک اس نے ماضی کی پالیسیوں کو پوری تندہی کے ساتھ جاری رکھا ہوا ہے۔ اس کی معاشی پالیسیوں میں کنفیوژن کی وجہ سے زراعت اور صنعت اور دیگر سیکٹرز جو پہلے ہی بیڈ گورننس کا شکار تھے میں مزید تباہی آئی ہے۔


ای پیپر